- الإعلانات -

قائم علی شاہ کے پاس وزارتیں تباہی سے دوچار ہیں:خواجہ اظہار

کراچی سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خواجہ اظہار الحسن نے کہا ہے کہ سندھ میں اقتدار میں آیے تو سب سے پہلے کراچی بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کو بحال کرائیں گے،جو محکمے وزیر اعلیٰ سندھ کے پاس ہیں وہ بے قابو ہونے کی وجہ سے تباہی سے دوچارہیں،موجودہ سندھ حکومت نے شہری علاقوں کوکچھ نہیں دیا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اپوزیشن لیڈر خواجہ اظہار کا کہنا تھا کہ جب بھی ہم حکومت میں آئے تو سب سے پہلے کراچی بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کو بحال کرائیں گے ، سندھ کے جو محکمے وزیر اعلیٰ کے پاس ہیں وہ بے قابو ہوچکے ہیں ،سندھ کے ایک ہزارسے زائد افسران کے کر پشن کے کیسز نیب اور اینٹی کرپشن میں چل رہے ہیں۔اپوزیشن لیڈر کا کہنا تھا کہ وز یر اعلی اور وزرء ا اپنے دفاتر سے باہر نہیں آتے ۔نا جانے سندھ حکومت چل کیسے رہی ہے؟ ان کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت وفاق کی جانب سے کم آمدن کا رونا رورہی ہے لیکن سندھ کو جتنے بھی پیسے ملے کرپشن کی نظر ہی ہوئے۔ خواجہ اظہارالحسن نے کہاکہ کراچی میں اربوں روپے کے ترقیاتی کام کرنے کے دعوے کئے جارہے ہیں،چاہتے ہیں کہ یہ بجٹ خرچ ہوتاہوابھی نظرآئے۔ترقیاتی بجٹ خرچ ہوتانظر نہیں آیا توسندھ حکومت بجٹ پیش نہیں کرپائے گی۔انہوں نے کہاکہ اگلے ہفتے شیڈو بجٹ پیش کررہے ہیں،شیڈوبجٹ کے لئے سب سے تجاویز لی ہیں۔خواجہ اظہار نے کہاکہ سندھ حکومت کی پالیسیوں کے باعث شہر تباہ ہورہا ہے،ایم کیو ایم کراچی کو تباہ نہیں ہونے دے گی،شہر کو جان بوجھ کر تباہ کیا جارہا ہے اس کے پیچھے مذموم مقاصد ہیں،کراچی ایک یتیم خانہ بن کر رہ گیا ہے،وزراء کو کچھ پتہ نہیں ان کے ماتحت افسران کیا کر رہے ہیں؟کراچی اجڑ رہا ہے اور کو پوچھنے والا نہیں ہیں۔