- الإعلانات -

آیندہ بجٹ میں زرعی شعبے کی ترقی کے لیے پیکج دیں،اسحاق ڈار

اسلام آباد وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈارنے اقتصادی جائزہ رپورٹ پیش کر دی ہے جس میں انہوں نے کہا کہ رواں سال زرعی شعبے کے اہداف حاصل نہیں ہو سکے ہیں ،آیندہ بجٹ میں زرعی شعبے کی ترقی کے لیے پیکج دیں گے،سرمایہ کاری تیل اور گیس سیکٹرمیں ہوئی ،براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری میں 5.4فیصد اضافہ ہوا،10ماہ میں ترسیلات زر16ارب 3کروڑ ڈالر رہی،10ماہ میں درآمدات32.75 ارب ڈالر رہی ،رواں مالی سال بجٹ خسارہ جی ڈی پی کا 1ارب 52کروڑ ڈالر رہا،زرعی شعبے میں0.19فیصد کمی ہوئی ،ریلوے اور پی آئی اے کی کارکردگی میں اضافہ ہوا،رواں مالی سال مہنگائی کی شرح 3 فی صد سے کم رہے گی۔
تفصیلات کے مطابق اسحاق ڈار کا کہناتھا کہ ایف بی آرکی ٹیکس وصولی میں 10.1فی صداضافہ ہوا ہے،رواں سال 10ماہ میں ایف بی آرنے2365ارب روپے جمع کیے ہیں،بے روزگاری کی شرح 5عشاریہ 9فیصد رہی ،،سرمایہ کاری میں 5عشاریہ 6فیصد اضافہ ہوا جس کے تحت رواں سال سرمایہ کاری 4ہزار 502ارب روپے رہی،10ماہ میں 18ارب 18کروڑ ڈالر کی برآمدات کی گئیں۔ان کاکہنا تھا کہ رواں مالی سال بجلی کی پیداوارمیں 12.18فیصد اضافہ ہوا،زرمبادلہ کی مجموعی مالیت 21ارب 60کروڑ ڈالر ہوگئی ہے،،10ماہ میں 441ارب روپے کے زرعی قرضے دیے گئے۔
ان کا کہناتھا کہ رواں مالی سال ٹیکس وصولی کے ہدف میں تبدیلی نہیں کی گئی، ،رواں مالی سال 3ہزار 1سو ارب روپے کا ہدف حاصل کرلیں گے،کراچی میں امن وامان کی بہترصورتحال اور ضرب عضب کی کامیابی کے ثمرات آرہے ہیں،ضرب عضب ،کراچی میں بہترامن کی وجہ سے کاروباری حالات بہتر ہوئے،اسٹاک مارکیٹ 36ہزار کی سطح سے تجاوز کرگئی ہے،2013 میں شرح سود 9 فیصد پر تھا،مانیٹری پالیسی میں شرح سود 5.75 فی صد کی کم ترین سطح پر آگیاہے،،انکم سپورٹ پروگرام کی وجہ سے غربت میں کمی آئی،،انکم سپورٹ پروگرام کے تحت 3کروڑ 20لاکھ افرادمستفید ہوئے،
اسحاق ڈار کا کہناتھا کہ برآمدات کے شعبے میں ٹیکسوں کی چھوٹ دینگے اور اس کا اعلان بجٹ میں کیا جائیگا، ،رواں مالی سال 600ارب روپے کا کسان پیکج دیا ،آیندہ بجٹ میں زرعی شعبے کی ترقی کے لیے پیکج دیں گے ،زرعی شعبے میں0.19فیصد کمی ہوئی ،ریلوے اور پی آئی اے کی کارکردگی میں اضافہ ہوا، ،زرعی شعبے میں مطلوبہ اہداف حاصل نہیں ہوسکے ،رواں مالی سال مہنگائی کی شرح 3 فی صد سے کم رہے گی، اگلے مالی سال کیلئے معاشی نمو6.02سے کم کرکے 5.7فیصد کیا جارہا ہے،موجودہ اہداف کے بعد ریونیو اور معاشی نمو پر نظر ثانی کر رہے ہیں ،زرعی شعبے کے اہداف حاصل نہیں ہوسکے، وزیرخزانہ اسحاق ڈار نے اقتصادی جائزہ رپورٹ پیش کردی۔