- الإعلانات -

طاہر القادری کا فوج سے انصاف کا مطالبہ،ساجد میر اور حافظ عبدالکریم شدید برہم

لاہور  امیر مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان سینیٹر پروفیسر ساجد میر  نے کہا ہے کہ ڈاکٹر طاہرالقادری کی طرف سے آرمی چیف سے انصاف کا مطالبہ عدلیہ پر عدم اعتماد کا اظہار ہے،طاہر القادری انصاف کی آڑ میں فساد برپا کرنا چاہتے ہیں۔ذرائع کےمطابق سینیٹر پروفیسر ساجد میرکا کہنا تھا کہ ماضی کی دھرنا سیاست میں بھی جان بوجھ کر آرمی چیف کو سیاسی معاملات میں گھسیٹنے کی کوشش کی گئی اور اب پھر جو کام عدالت کے کرنا کا ہے اسکا تقاضا آرمی چیف سے کیا جارہا ہے، انصاف کا تقاضا عدلیہ سے کرنا چاہیے جوکہ درست راستہ نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ذمہ داروں کے خلاف ضرور کارروائی ہونی چاہیے، متاثرہ خاندانوں کو انصاف ملنا چاہیے مگر جو راستہ مولانا صاحب اختیار کررہے ہیں اس سے صاف نظر آرہا ہے کہ وہ انصاف کی آڑ میں فساد برپا کرنا چاہتے ہیں ،جس کا مقصد جمہوریت کو ڈی ریل کرنا ہے۔سینیٹر ساجد میر کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر طاہر القادری کا دورہ پاکستان صرف اور صرف سیاسی ماحول خرا ب کرنے کے لئے ہوتا ہے ،وہ سیاسی پھلجڑیاں بکھیرنے کے بعد اپنے اصل وطن کینیڈا واپس چلے جائیں گے۔عوامی تحریک کے ترجمان کا کہنا تھا کہ انصاب کے مطالبے کا فساد سے کیا تعلق ہو سکتا ہے یہ سب ملکر قاتلوں کو بچانا چاہتے ہیں