- الإعلانات -

یوم علی کے حوالے سے ملک بھر سے ماتمی جلوس برآمد،سکیورٹی ہائی الرٹ

کراچی / لاہور  حضرت علی کرم اللہ وجہہ کے یوم شہادت پر ملک بھر میں سکیورٹی ہائی الرٹ کر دی گئی ہے۔ مختلف شہروں سے ماتمی جلوس بھی برآمد ہو رہے ہیں جس کی وجہ سے پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اپنی ذمہ داریاں اد ا کر رہے ہیں۔ لاہور میں اندرون شہر کو جانے والے راستوں کو سیل کر دیا گیا۔ متبادل روٹس نہ ملنے پر لوگوں کو مشکلات کا سامنا بھی کرنا پڑ رہا ہے۔

کراچی میں مرکزی جلوس یوم علی کرم اللہ وجہہ کی مناسبت سے جلوس سخت سکیورٹی میں نشتر پارک سے نکالا جا رہا ہے۔ جلوس کی گزر گاہ کو بم ڈسپوزل یونٹ کے عملہ نے ڈیٹو نیٹر روبوٹ کے ذریعے چیک کیا۔ نماز ظہرین امام بارگاہ علی رضا ایم اے جناح روڈ پر ادا کی جائے گی۔ بعد نماز ظہرین امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن کی جانب سے دہشت گردی کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔

مرکزی جلوس کی قیادت بو تراب اسکاوٹس کرے گی۔ اس کے علاوہ مرکزی جلوس عزا کے داخلی و خارجی راستوں پر اسکاو¿ٹس رابطہ کونسل‘ وحدت اسکاو¿ٹس‘ امامیہ اسکاو¿ٹس سمیت دیگر اسکاو¿ٹس گروپس کے 5 ہزار سے زائد رضا کار سکیورٹی کے فرائض انجام دیں گے۔

جلوس کے روٹس نشتر پارک‘ نمائش چورنگی‘ سی بریز‘ ایمپریس مارکیٹ‘ ریگل چوک‘ تبت سینٹر‘ ریڈیو پاکستان‘ بولٹن مارکیٹ‘ لائٹ ہاو¿س‘ خوجہ مسجد کھارادر سے ہوتا ہوا حسینیہ ایرانیاں پر اختتام پذیر ہوگا۔ جلوس کی سکیورٹی کے لیے نو ہزار چھ سو تیس پولیس و رینجر اہلکار تعینات کیے گئے ہیں۔

صوبائی وزیر داخلہ سندھ سہیل انور خان سیال نے حضرت علیؓ کے یوم شہادت پر کراچی سمیت سندھ بھر میں سکیورٹی ہائی الرٹ کے احکامات جاری کرتے ہوئے آئی جی سندھ‘ ایڈیشنل آئی جیز اور تمام زونل ڈی آئی جیز، کراچی‘ حیدرآباد‘ میرپور خاص‘ سکھر‘ لاڑکانہ‘ شہید بینظیر آباد کو سکیورٹی پلان پر سختی سے عملدرآمد کرا نے کی ہدایت کی ہے