- الإعلانات -

نوبیل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی کروڑ پتی بن گئی

لندن: پاکستان کی بیٹی اور نوبیل انعام جیتنے والی دنیا کی کم عمر ترین لڑکی ملالہ یوسف زئی کا خاندان کروڑ پتی بن گیا۔ کتاب کی فروخت اور لیکچرز سے ملالہ ہر سال لاکھوں پاونڈز کمانے لگی۔

قسمت کی دیوی ملالہ یوسفزئی پر مہربان۔ دولت اور شہرت کھل کر برسنے لگی۔ تقریروں، تقاریب اور کتاب کی فروخت سے ملالہ یوف زئی کا خاندان کروڑ پتی بن گیا۔ برطانوی میڈیا کے مطابق لندن میں ملالہ یوسفزئی کی کمپنی ہر سال لاکھوں پاونڈز کما رہی ہے۔ کمپنی میں ملالہ کیساتھ اس کے والدین برابر کے حصے دار ہیں۔ 2013 میں شائع ہونیوالی کتاب سے ملالہ نے 20 لاکھ پاونڈز کمائے ۔ پوری دنیا میں کتاب کی 18 لاکھ کاپیاں فروخت ہو چکی ہیں۔ ملالہ یوسف زئی کو ایک لیکچر دینے کے 1 لاکھ 14 ہزار پاونڈز ملتے ہیں۔ اس نے گزشتہ سال اپنی آمدنی پر برطانیہ میں 2 لاکھ پاون ٹیکس بھی ادا کیا تھا۔ ملالہ یوسف زئی اپنی کمائی کا ایک بڑا حصہ دنیا بھر میں لڑکیوں کی تعلیم کے پراجیکٹس پر خرچ کرتی ہے۔ سوات کی رہائشی ملالہ کو اکتوبر 2012 میں قاتلانہ حملے میں زخمی ہونے کے بعد برطانیہ منتقل کر دیا گیا تھا۔