- الإعلانات -

پاکستان میں کورونا کی سنگین صورتحال، پابندیاں مزید سخت کرنے کا اعلان آج متوقع

اسلام آباد : پاکستان میں کورونا کی سنگین صورتحال کے پیش نظر پابندیاں مزید سخت کرنے کا اعلان آج متوقع ہے ، ہائی رسک شہروں میں سات سے دس دن کا لاک ڈاؤن لگایا جاسکتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان نے قومی رابطہ کمیٹی برائے کورونا کا اجلاس آج طلب کرلیا، جس میں کورونا کی تیسری لہر کے باعث پابندیوں پرغورکیا جائے گا، جس کے بعد کورونا پابندیوں میں سختی کا اعلان کیا جائے گا۔

این سی او سی نے کورونا صورتحال پر پابندیاں سخت کرنے کیلئے تجاویز تیار کرلیں اور تمام تجاویز صوبوں کو بھجوا دیں، صوبے وفاق کی پابندیوں میں سختی کی تجاویز پر رائے دیں گے۔

حکومت نے پابندیاں دو مراحل میں سخت کرنے کی تجویز دی ہے، پہلے مرحلے میں شام چھ سے سحری تک کاروباری سرگرمیاں بند رکھنے سمیت ہفتہ اور اتوار کو کاروباری سرگرمیاں مکمل بند کرنے کی تجویز ہے جبکہ دفاتر میں نصف عملےکی حاضری کے فیصلے پر سختی سےعملدرآمد کرانے اور دفاتر کےاوقات کارصبح 9 تا دوپہر 2 بجے تک کرنےکی تجویز بھی شامل ہیں۔

وفاقی حکومت نے جم، ایکسرسائز سینٹرز کی مکمل بندش کی تجویز دی ہے اور کہا ہے کہ فیز ون میں کورونا پھیلاؤنہ رکنے پر لاک ڈاؤن کا نفاذ کیا جاسکتا ہے۔

این سی او سی کے مطابق بیس فیصد سے زائد مثبت شرح والے شہروں میں مکمل لاک ڈاؤن کی تجویز جبکہ ہائی رسک شہروں میں سات سے دس دن کا لاک ڈاؤن کیا جا سکتا ہے۔

سندھ حکومت نے بھی وفاقی حکومت کی مکمل پیروی کا فیصلہ کرلیا ہے۔۔۔ سندھ این سی اوسی کےفیصلوں پرمن وعن عمل کرے۔