- الإعلانات -

مظفر آباد: آزاد کشمیر انتخابات کے دوران پرتشدد واقعات میں د و افراد کی ہلاکت کے بعد بیرسٹر سلطان محمود جلتی پر تیل ڈالنے لگے۔ سابق وزیراعظم آزاد کشمیر نے کارکنوں کو کھلم کھلا گولی چلانے کی ترغیب دے ڈالی۔ سیاست میں برداشت کا درس کون دے گا۔ آزاد کشمیر میں ریاستی انتخابات ضلع حویلی میں صورتحال بدستور کشیدہ۔ دو سیاسی جماعتوں کے تصادم میں دو افراد جان کی بازی ہار چکے لیکن قیادت ہے کہ امن کے بجائے تشدد کا درس دے رہی ہے۔ سابق وزیراعظم بیرسٹر سلطان محمود نے بھی کارکنوں کھلم کھلا گولی چلانے کی ترغیب دے کر جلتی پر تیل ڈالنے کی کوشش کی ہے۔ سیاست برداشت کا دوسرا نام لیکن جب سیاست دان ہی قانون ہاتھ میں لینے کا پرچار کرنے لگیں تو سوال تو اٹھتا ہے کہ ایسے میں امن کا درس کون دے