- الإعلانات -

(قومی اسمبلی میں لڑائی ، گالم گلوچ)بجٹ کی کتاب کی اتنی بے حرمتی میں نے کبھی نہیں دیکھی ، ایس کے نیازی

قومی اسمبلی میں قانون سازی کی جانب جانے کے بجائے لڑائی کی طرف جایا جا رہا ہے ، پی ٹی آئی نے ٹھان لی ہے اس نے بجٹ پر کسی کو بات نہیں کرنے دینی
فیڈرل حکومت اور وزراء لوگوں سے لڑائی کررہے ہیں ، گالیاں دے رہے ہیں ، کتابیں مار رہے ہیں ، عوام میں پارلیمنٹ کا بہت احترام ہوتا ہے،یہ سب کیا ہو رہاہے
حکومت کو تین سال گزر گئے تمام وقت آرڈیننس بنانے میں گزارا ،موجودہ ور میں کرپشن کی انتہا ہو چکی ہے ، کرونا کے حالات میں بجٹ بہتر پیش کیا گیا ہے
مخالف لوگوں نے بھی بجٹ کی تعریف کی ، مجھے نہیں معلوم حکومت کو کس بات کا ڈر ہے ، پیپلز پارٹی بھی اس کے ساتھ ہے پھر کیوں ایسے حالات پیدا کیے جاتے ہیں
پارلیمنٹ میں ہم اپنی بچوں کو کیا سکھا رہے ہیں ،سندھ حکومت کے اقدامات اچھے ہیں ، مجھے محسوس ہور ہا ہے پیپلز پارٹی آئندہ پانچ سال کی تیار ی کررہی ہے
بلاول اچھے کارڈ کھیل رہے ہیں ،سیاسی سوجھ بوجھ کا مظاہرہ کررہے ہیں ، میں پر سکون اور معلوماتی پروگرام کرتا ہوں ، آخر حکومتی لوگ لڑائی کیوں کرتے ہیں
ماضی قریب میں ہی دیکھ لیں حکومتی وزراء اور وزیر اعظم کے معاون کیسے کیسے لڑتے آئے ، روحیل اصغر کی حالت کو دیکھ لیں ،بجٹ کی کتاب کا برا حال کیا جارہا ہے
سندھ نے وفاق اور پنجاب سے بہتر کام کیا ہے ، لوگ کہتے ہیں گاڑی نہیں چل رہی جو کچھ بھی قومی اسمبلی میں ہوا وہ نہیں ہونا چاہئے تھا،سچی بات میں گفتگو

اسلا م آباد (روزنیوزرپورٹ)پاکستان گروپ آف نیوز پیپرز کے چیف ایڈیٹر اور روزنیوز کے چیئرمین ایس کے نیازی نے پروگرام ’’ سچی بات ‘‘ میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ قومی اسمبلی میں قانون سازی کی جانب جانے کے بجائے لڑائی کی طرف جایا جا رہا ہے ، پی ٹی آئی نے ٹھان لی ہے کہ اس نے بجٹ پر کسی کو بات نہیں کرنے دینی ، فیڈرل حکومت اور وزراء لوگوں سے لڑائی کررہے ہیں ، گالیاں دے رہے ہیں ، کتابیں مار رہے ہیں ، عوام میں پارلیمنٹ کا بہت احترام ہوتا ہے ، حکومت کو تین سال گزر گئے اور یہ تمام وقت اس نے آرڈیننس بنانے میں گزارا ، اس دور میں کرپشن کی انتہا ہو چکی ہے ، کرونا کے حالات میں بجٹ بہتر دیا ہے ، مخالف لوگوں نے بھی تعریف کی ہے ، مجھے نہیں معلوم حکومت کس بات کا ڈر ہے ، پیپلز پارٹی بھی اس کے ساتھ ہے پھر کیوں ایسے حالات پیدا کیے جاتے ہیں ،پارلیمنٹ میں ہم اپنی بچوں کو کیا سکھا رہے ہیں ، سندھ حکومت کے اقدامات اچھے ہیں ، مجھے محسوس ہور ہے ہیں کہ وہ آئندہ پانچ سال کی تیار ی کررہے ہیں ، بلاول بھٹو اچھے کارڈ کھیل رہے ہیں ، وہ سیاسی سوجھ بوجھ کا مظاہرہ کررہے ہیں ، انہوں نے کہا کہ میں بڑا پر سکون اور معلوماتی پروگرام کرتا ہوں ، کسی کو لڑاتا نہیں ، آخر حکومتی لوگ لڑائی کیوں کرتے ہیں ، ماضی قریب میں ہی دیکھ لیں حکومتی وزراء اور وزیر اعظم کے معاون کیسے کیسے لڑتے آئے ، روحیل اصغر کی حالت کو دیکھ لیں بجٹ کی کتاب کا برا حال کیا جارہا ہے ، میں نے بجٹ کی کتاب کی اتنی بے حرمتی کبھی نہیں دیکھی، یہ لڑائیاں ہونا بد قسمتی ہے ، انہوں نے کہا کہ سندھ نے وفاق اور پنجاب سے بہتر کام کیا ہے ، لوگ کہتے ہیں کہ گاڑی نہیں چل رہی جو کچھ بھی قومی اسمبلی میں ہوا وہ نہیں ہونا چاہئے تھا ۔