- الإعلانات -

ہنگامہ آرائی: 7ارکان کے قومی اسمبلی کی حدود میں داخلے پر پابندی ختم

اسلام آباد: اسپیکر نے ہنگامہ آرائی کرنے والے 7ارکان کے قومی اسمبلی کی حدود میں داخلے پر پابندی ختم کردی۔

تفصیلات کے مطابق اسپیکراسد قیصر نے ہنگامہ آرائی کرنے والے سات ارکان پر گزشتہ پابندی لگائی تھی تاہم اب وہ پابندی اٹھا لی گئی ہے۔ مذکورہ اراکین اسمبلی کی حدود میں داخل ہوسکتے ہیں۔جن اراکین پر پابندی عائد کی گئی تھی ان میں علی نواز اعوان، عبدالمجید خان ،فہیم خان، اپوزیشن ارکان شیخ روحیل، علی گوہر، چودہری حامد اور آغارفیع اللہ شامل تھے۔قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کی جانب سے متعلقہ اراکین اور سکیورٹی کو آگاہ کردیا گیا۔

اسپیکر نے ارکان پر پابندی معاملات کو سلجھانے اور ماحول خوشگوار رکھنے کے لیے اٹھائی۔ خیال رہے کہ اپوزیشن نے کل سپیکر کو بھیجے گئے مراسلے میں ممبران پر پابندی اٹھانے کا مطالبہ کیا تھا۔ہنگامہ آرائی کرنے والے ارکان کا قومی اسمبلی میں داخلہ بنددوسری جانب ایوان میں سینیٹائزر بوتلوں پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔ اراکین اسمبلی کو صرف ماسک فراہم کیے گئے۔ گزشتہ روز سینیٹائزر کی بوتل کے حملے سے ایک رکن زخمی ہوا تھا۔ اس سے قبل ایوان میں بھاری کتابوں کی فراہمی بھی بند کردی گئی تھی۔ اسپیکر کی ہدایت پر ایوان میں سیکیورٹی حکام نے تفصیلی معائنہ بھی کیا ہے۔