- الإعلانات -

10 لاکھ پاکستانیوں کو سگریٹ چھوڑنے کے لیے مہم کا آغاز کیا جا رہا ہے، عبیر مرزا

دنیا بھر میں تمباکو نوشی کرنے والوں کی تعداد ایک ارب سے زیادہ ہے۔ ایسوسی ایشن فارسموکنگ الٹرنیٹوز پاکستان
اسلام آباد (یکم نومبر 2021): ملک بھرمیں سگریٹ نوشی کرنے والوں کی بڑھتی ہوئی تعداد پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے پاکستانیوں کو سگریٹ چھوڑنے کی ضرورت سے آگاہ کرنے کے لیے ملک بھر میں آگاہی مہم کا آغاز کر دیا گیا ہے۔
ایسوسی ایشن فارسموکنگ الٹرنیٹوز پاکستان ملک بھر میں سگریٹ نوشی کرنے والوں کو مشاورت اور مدد فراہم کرنے کے لیے ڈیجیٹل پلیٹ فارم کے ذریعے 10 لاکھ تمباکو نوشی کرنے والوں کی زندگیوں سے سگریٹ کو ہٹانے میں مدد فراہم کرے گی۔
برطانیہ میں ہر سال اکتوبر کے مہینے میں تمباکو نوشی کرنے والے افراد کو تمباکو نوشی چھوڑنے کے لیے ایک مہم منعقد کیا جاتی ہے۔ اس سال اس مہم کے بہت عمدہ نتائج سامنے آئے۔ اس سال نومبر ۲۰۲۱ میں پاکستان میں بھی اسی طرح کی مہم شروع کرنے کا عزم کیا گیا ہے تاکہ لوگوں میں آگاہی پیدا کی جا ئے اور ان کی صحت کو بہتر بنایا جا سکے۔
تقریباً تمام سگریٹ نوشی کرنے والےافراد سگریٹ سے وابستہ خطرات کو سمجھتے ہیں لیکن ان کا استعمال اس وقت تک جاری رکھتے ہیں جب تک کہ وہ قلبی امراض، کینسر یا سگریٹ کے استعمال سے وابستہ دیگر بیماریوں کا شکار نہ ہو جائیں۔ ایسوسی ایشن فار سموکنگ الٹرنیٹس پاکستان جیسی تنظیموں اور ریگولیٹری اتھارٹیز کا کردار ہے کہ وہ ابھی لوگوں کو سگریٹ چھوڑنے پر مجبور کریں، ان خیالات کا اظہار ایسوسی ایشن فارسموکنگ الٹرنیٹس پاکستان کے بانی اور سی ای او عبیر مرزا نے کیا۔
انہوں نے مزید کہا کہ ایسوسی ایشن فارسموکنگ الٹرنیٹیوز پاکستان تمباکو کنٹرول کی پالیسیوں اور حکومت کی طرف سے اٹھائے گئے اقدامات کی حمایت کرتی ہے، تاہم گزشتہ دہائی کے دوران سگریٹ کے استعمال کے اعدادوشمار بتاتے ہیں کہ ان سے مطلوبہ نتائج حاصل نہیں ہوئے۔
تازہ اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ عالمی سطح پر تمباکو نوشی کی شرح میں کمی کے باوجود، تمباکو نوشی کرنے والوں کی تعداد اب بھی ایک ارب سے زیادہ ہے، جن میں سے 80 فیصد کم اور درمیانی آمدنی والے ممالک ہیں، جس کی وجہ صحت عامہ کے زیادہ اخراجات ہیں۔
پندرہ ملین سے زائد سگریٹ نوشی کرنے والے افراد کے ملک میں، پاکستان کو سگریٹ کے صحت عامہ پر پڑنے والے اثرات کو روکنے میں مدد کے لیے جدید حل کی اشد ضرورت ہے۔ اس آگاہی مہم کے ذریعے ایسوسی ایشن فارسموکنگ الٹرنیٹس پاکستان کا مقصد سگریٹ نوشی کے مضر صحت اثرات کے بارے میں آگاہی پیدا کرنا ہے جن سے برطانیہ، یورپ اور جاپان جیسے دیگر ممالک کامیاب رہے ہیں۔
ایسوسی ایشن فار سموکنگ الٹرنیٹیوز پاکستان ہم خیال افراد کا ایک اتحاد ہے، جو پاکستان میں سگریٹ نوشی کی شرح کو نمایاں طور پر کم کرنے میں مدد کرنے کے لیے تمباکو نوشی کرنے والوں اور پالیسی سازوں کے درمیان سائنسی طور پر ثابت شدہ تمباکو نوشی کے متبادل ذرائع کو اپنانے کی وکالت کرتا ہے۔