- الإعلانات -

اپوزیشن نے سائبر کرائمز بل کی قومی اسمبلی میں مخالفت کر دی

اسلام آباد: اپوزیشن نے سینیٹ سے ترامیم کے ساتھ متفقہ طور پر منظور کئے جانےو الے سائبر کرائمز بل کی قومی اسمبلی میں مخالفت کر دی ۔

سید نوید قمر کہتے ہیں کہ فوٹو شئیر کرنے پہ بھی سالوں کی قید والا قانون کیسے جمہوری ہو سکتا ہے،علی محمد خان کا کہنا تھا کہ بل میں مقدس شخصیات اور تحفظ رسالت سے متعلق کوئی شق شامل نہیں ہے ۔

اسپیکر سردار ایاز صادق کی زیر صدارت قومی اسمبلی اجلاس میں وزیر مملکت آئی ٹی و ٹیلی کام انوشہ رحمان نے سینیٹ سے منظور کردہ الیکٹرانک جرائمز کی تدارک کا بل 2016 پیش کیا تو اپوزیشن ارکان نے مخالفت کر دی۔بل پر بحث میں حصہ لیتے ہوئے سید نوید قمر نے کہا کہ بل میں شامل بعض سزائیں نا مناسب ہیں۔

بچوں کے لئے جو سزائیں تجویز کی گئیں وہ بھی ناقابل قبول ہیں۔نفیسہ شاہ نے اسے ڈریکونئین قانون قرار دے دیا اور کہا کہ وزیر مملکت ان کے دور میں اس بل کی مخالفت کرتی تھیں۔پی ٹی آئی کے علی محمد خان نے کہا کہ یوتھ کو اس قانون کے ذریعے مفلوج کیا جا رہا ہے،بہت سے قدغنیں لگائی جا رہی ہیں۔