- الإعلانات -

ڈیرہ غازی خان: پی پی 240 میں ضمنی انتخاب کے لئے پولنگ کا وقت ختم

ڈیرہ غازی خان: پی پی 240 میں ضمنی انتخاب کے لئے پولنگ کا وقت ختم ہونے کے بعد ووٹوں کی گنتی جاری ہے جب کہ ووٹنگ کے دوران الیکشن کمیشن کے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی بھی دیکھنے میں آئی ہے۔

پی پی 240 ڈیرہ غازی خان میں ضمنی انتخاب کے لئے پولنگ کا عمل صبح 8 بجے شروع ہوا جو شام 5 بجے تک بلا تعطل جاری رہا۔ پی پی 240 میں رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد ایک لاکھ 50 ہزار410 ہے جس میں مرد ووٹرز کی تعداد 86 ہزار230 جب کہ خواتین ووٹرز کی تعداد 64 ہزار180ہے۔ ووٹنگ کے لئے حلقے میں 128 پولنگ اسٹیشن قائم کیے گئے ہیں جس میں سے 25 کو انتہائی  حساس اور 47 کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

الیکشن کمیشن نے کسی بھی نا خوشگوار واقعہ اور دھاندلی کو روکنے کے لئے فوج کی نگرانی میں الیکشن کرانے کا فیصلہ کیا تاہم اس کے باوجود پی پی 240 ڈیرہ غازی خان میں  ووٹنگ کے عمل کے دوران ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی دیکھنے میں آئی اور پولنگ اسٹیشن کے اندر لوگوں کو کھلے عام بیلٹ پیپر پر مہر لگاتے دیکھا گیا۔ اس کے علاوہ مختلف پولنگ اسٹیشنز پر مقناطیسی سیاہی کی جگہ عام سیاسی استعمال ہونے کی شکایات بھی موصول ہوئیں۔

الیکشن کمیشن نے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کا نوٹس لیتے ہوئے پولنگ اسٹیشن میں موجود پریزائیڈنگ افسر کو شوکاز نوٹس جاری کردیا اور ریٹرننگ افسر کو کھلے عام ووٹ ڈالنے والے افراد کے خلاف فوری طور پر ایف آئی آر درج کرانے کا حکم دیا۔ اس کے علاوہ الیکشن کمیش نے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر ریٹرننگ افسر سے وضاحت طلب کرتے ہوئے کہا کہ ووٹ کا تقدس بحال رکھنا سب کی ذمے داری ہے۔

پی پی 240 ڈیرہ غازی خان میں مسلم لیگ (ن) کے ممتاز قیصرانی اور تحریک انصاف کے امام بخش قیصرانی کے درمیان سخت مقابلے کی توقع ہے۔

واضح رہے کہ پی پی 240 ڈیرہ غازی خان سے مسلم لیگ (ن) کی شمعونہ عنبرین کو الیکشن ٹریبونل نے اثاثے چھپانے پر نااہل قرار دے دیا تھا۔