- الإعلانات -

افغانستان میں غیرریاستی عناصرسرگرم نہیں ہونے چاہیئں،پاکستان

اسلام آباد:پاکستان نے کابل حکومت کو مصالحت کی نئی پیشکش کرتے ہوئے کہاہےکہ افغانستان میں غیرریاستی عناصرسرگرم نہیں ہونے چاہیئں۔

ترجمان دفترخارجہ نفیس زکریا نے اسلام آباد میں میڈیا کو بریفنگ میں کہاکہ پاکستان کشمیریوں کی بھرپور حمایت کرتا ہے، حریت رہنماؤں نے حالیہ پیغام میں کہا ہے کہ حالیہ جہدوجہد ان کی تحریک کو مزید آگے لےگئی ہے ،وہ دنیا کی طرف بھی دیکھ رہے ہیں، عالمی برادری نے بھی بھارتی مظالم کیخلاف آوازبلند کی۔

نفیس ذکریا کا کہناتھاکہ پاکستان کو دہشت گردی کےبڑے چیلنجز کاسامنا ہے، افغانستان میں غیرریاستی عناصرکی موجودگی پر پاکستان کو تحفظات ہیں، وہاں داعش کے پھیلاؤ اور طالبان کی سرگرمیوں سے بھی ہم آگاہ ہیں، وزیراعظم نوازشریف نے افغان چیف اگزیکٹو عبد اللہ عبد اللہ کو دورہ پاکستان کی دعوت بھجوادی ہے ۔

ترجمان دفترخارجہ نے بتایاکہ پاکستان میں ترک اسکول جس تنظیم کے تحت کام کررہے تھے اس پرترکی نے پابندی لگادی ہے، پاکستان رائج قوانین کے مطابق اس معاملہ کو دیکھ رہا ہے۔

انہوں نےکہا کہ نائیجیریامیں فورسز کے ہاتھوں مسلمانوں کی شہادت قابل مذمت ہے.