- الإعلانات -

لاہور: بیٹی کو زندہ جلانے والی ماں کو سزائے موت، بھائی کو عمر قید

لاہور میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے پسند کی شادی کرنے والی لڑکی کو زندہ جلانے والی ماں کو سزائے موت اور بھائی کو عمرقید کی سزاسنا دی ۔

لاہور کے علاقے فیکٹری ایریا کی رہائشی ملزمہ نسرین بی بی پر بیٹے کی مدد سے اپنی بیٹی زینت کو زندہ جلانے کا الزام تھا۔

لاہور کی انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں پولیس کی جانب سے جمع کرائے گئے چالان میں کہاگیا کہ ملزمہ نسرین بی بی اور اس کے بیٹے انیس نے پسند کی شادی کرنے پرزینت کو 8جون 2016ءکو زندہ جلادیا تھا۔

ملزمہ نسرین نےبیٹی کو زندہ جلانے کا اعتراف کر لیا تھا،دوران سماعت ملزم انیس کی جانب سے بیان دیا گیا کہ زینت نے پٹرول چھڑک کرخود کو آگ لگائی۔

خصوصی عدالت کے جج چوہدری محمد الیاس نے فیصلہ سناتے ہوئے نسرین کو سزائے موت اور انیس کو عمرقید کی سزا کا حکم سنادیا۔