- الإعلانات -

چوہدری نثار کے سامنے وزیراعظم بے بس ہیں، خورشید شاہ

سکھر: قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر سید خورشید شاہ کا کہنا ہےکہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد میں سب سے بڑی رکاوٹ چوہدری نثار ہیں اور ایسا لگتا ہے کہ وزیراعظم نوازشریف اپنے وزیرداخلہ کے سامنے بے بس ہیں۔ 

سکھر میں کاشت کاروں کو آٹو رکشے کی تقسیم کی تقریب کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ حکومتی وزرا کی جانب سے ہمیں تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے اور ان میں وہ لوگ بھی موجود ہیں جو پرویز مشرف دور میں بھی وزیر ہی تھے، ہمارے دور میں عوام کی خدمت کے لئے تمام وسائل کو بروئے کار لایا گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ  نیشنل ایکشن پلان میں سب سے بڑی رکاوٹ وفاقی وزیرداخلہ ہیں ایسا لگتا ہے کہ وزیراعظم نوازشریف چوہدری نثار کے سامنے بے بس ہیں۔

قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ ہم پارلیمنٹیرین ہیں اور ہمارے لئے ہر لفظ اہمیت رکھتا ہے ، پاناما لیکس ملکی تاریخ کا سب سے بڑا اسکینڈل ہے اور اس میں ملک کے سربراہ کے خاندان کا نام آنا اہمیت کا حامل ہے۔ یہ کیس (ن) لیگ کے گلے پڑ گیا ہے۔

سندھ اسمبلی میں امداد پتافی اور نصرت سحر عباسی کے معاملے اور معافی پر خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ اسمبلی میں اکثر ایسی باتیں ہوجاتی ہیں، ہر بات کے 2 مطلب ہوتے ہیں اگر کسی کو بات سمجھ میں نہیں آتی تو اسے چیمبر میں لے جاکر سمجھایا جاتا ہے لیکن امداد پتافی کی بات کو جو مطلب نصرت سحر نے دیا اس بارے میں کچھ نہیں کہہ سکتا۔  ان کا کہنا تھا کہ پیٹرول کی بوتل ساتھ لے کر چلنا اور یہ مطالبہ کرنا کہ امداد پتافی مستعفیٰ  ہوجائے، اس طرح سے سسٹم نہیں چل سکتا، یہ ایک غلط روایت ہے تاہم کسی کی دل آزاری پر صوبائی وزیر نے معافی مانگ کر اچھی روایت قائم کی ہے۔