- الإعلانات -

رینجرز سے اختیارات واپس لینے کا تاثر غلط ہے، محکمہ داخلہ سندھ

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ رینجرز کی ایک سال کے لیے تعیناتی کی توسیع 20 جولائی 2016 ء کو کی گئی تھی، اس توسیع کے بعد رینجرز کو 19 جولائی 2017 ء تک اختیارات حاصل ہیں۔

محکمہ داخلہ سندھ کے اعلامیے میں مزید کہا گیا ہے کہ رینجرز کو یکم اگست 2016ء کے نوٹیفکیشن کے تحت پیٹرولنگ، پکٹ، اہم تنصیبات اور پولیس کے بیک اپ سپورٹ کے اختیارات ہیں۔

اعلامیے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ رینجرز اہم شخصیات، تقریبات، غیرملکیوں کی سیکیورٹی پر پولیس کی معاونت کرتی ہے، رینجرز انٹیلی جنس بیس آپریشن قانون کے مطابق کرسکتی ہے، قانونی طور پر رینجرز اپنے مینڈیٹ کے تحت کردار ادا کر رہی ہے۔