- الإعلانات -

نیب قانون بل پر گورنر سندھ کے اعتراضات اسمبلی میں اٹھائیں گے، مراد علی شاہ

کراچی میں پیپلز پارٹی کے میڈیا سیل میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ گورنر سندھ کی جانب سے نیب قانون کے بل پر جو اعتراضات اٹھائے گئے ہیں ان پر اسمبلی میں بات کریں گے جب کہ گورنر سندھ کو بل واپس کرنے کا اختیار حاصل ہے۔

مراد علی شاہ نے کہا کہ 1999 میں سابق صدر پرویز مشرف نے نیب کا قانون ایمرجنسی میں نافذ کیا تھا جب کہ نیب کے لئے سپریم کورٹ نے ہی کہا تھا کہ نیب دفن ہوچکا ہے۔

وزیراعلی سندھ نے شکوہ کیا کہ صوبے کے گورنر ہونے کے باوجود محمد زبیر کا مفاد صوبے کے ساتھ نہیں ہے۔

خیال رہے کہ وزیر قانون سندھ ضیا لنجار نے 3 جولائی کو "نیب آرڈیننس 1999 سندھ” منسوخی کا بل اسمبلی میں پیش کیا تھا جسے حکومت نے اپوزیشن کے شدید احتجاج کے باوجود منظور کرلیا تھا۔

نیب آرڈیننس منسوخی بل کی منظوری سے نیب کا سندھ میں صوبائی حکومت کے ماتحت اداروں اور افسران کے خلاف کارروائی کا اختیار ختم ہوجائے گا جب کہ قومی احتساب بیورو (نیب) سندھ میں صرف وفاقی اداروں کے حکام کے خلاف کارروائی کا مجاز ہوگا۔