- الإعلانات -

عمران خان سے درخواست ہے کہ اب دھاندلی کا شور نہ مچائیں‘ پرویز رشید

عمران خان سے درخواست ہے کہ دھاندلی کا شور نہ مچائیں‘ چوہدری سرور کو وعدہ یاد دلاتا ہوں ابھی تک این اے 122 میں دھاندلی کے ثبوت نہیں دیئے،2013-14کی نسبت آج کا پاکستان زیادہ محفوظ اور پر امن ہے‘ بلدیاتی انتخابات کا ہونا فتح ہے‘ دہشتگردی کیخلاف جنگ انجام تک پہنچ رہی ہے‘ دہشتگردی کی جنگ میں بچوں کو استعمال کیا گیا‘ پنجاب اور سندھ میں انتخابات پرامن ہوئے‘ بچوں کے ہاتھ میں بندوق کی بجائے قلم ہونی چاہیے‘ بچوں کو تعلیم دے کر ہی انتہا پسندی کی سوچ سے دور کیا جا سکتا ہے ۔وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر پرویز رشید نے کہا کہ عوام نے تحریک انصاف کے شور پر توجہ دینا چھوڑ دی، عمران خان سے درخواست ہے کہ اب دھاندلی کا شور نہ مچائیں، چوہدری سرور کو وعدہ یاد دلاتا ہوں، انہوں نے ابھی تک این اے 122 میں دھاندلی کے ثبوت نہیں دیئے،2013-14کی نسبت آج کا پاکستان زیادہ محفوظ اور پر امن ہے، بلدیاتی انتخابات کا ہونا سب کی فتح ہے، دہشت گردی کے خلاف جنگ انجام تک پہنچ رہی ہے، دہشت گردی کی جنگ میں بچوں کو استعمال کیا گیا، پنجاب اور سندھ میں پرامن انتخابات ہوئے، اتنے بڑے الیکشن ہونے کے باوجود صرف اکا دکا واقعات رپورٹ ہوئے، بچوں کے ہاتھ میں بندوق کی بجائے قلم ہونی چاہیے، بچوں کو تعلیم دے کر ہی انتہا پسندی کی سوچ سے دور کیا جا سکتا ہے۔ وہ جمعہ کو یہاں بچوں کے عالمی دن کے موقع پرتقریب سے خطاب اور بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اطلاعات نے کہا کہ بچوں کے حقوق کے حوالے سے ابھی بہت کام کرنا باقی ہے، لاکھوں کی تعداد میں بچے اب بھی عدم توجہی کا شکار ہیں، پاکستان سے چائلڈ لیبر ختم کرنا چاہتے ہیں، چائلڈ لیبر کا شکار اور سکول نہ جانے والے بچوں کو اکٹھا کرنا چاہتے ہیں، عدم توجہی کا شکار بچوں کو بلا کر ان کے مسائلنہیں اور ان سے معافی مانگیں ،تسلیم کرنا پڑے گا کہ ایسے بچوں کی زندگی میں کوئی تبدیلی نہیں آرہی، بچے چھوٹے پودوں کی مانند ہیں، انکی حفاظت ہم سب کی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے کہا کہ پودوں کو مضبوط بنائے بغیر پھل حاصل نہیں کیا جاسکتا، ہمیں بچوں کو تعلیم تک رسائی دینا ہو گی، بچوں کو بہترین تعلیم دے کر انتہا پسندی کی سوچ سے دور کرنا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمیں بچوں کو خود کش جیکٹس کے بجائے سکول کا یونیفارم دینا ہے، بچے کے ہاتھ میں بندوق کی بجائے قلم ہونی چاہیے، بچوں کو تمام حقوق دے کر ہی ان کا عالمی دن منا سکتے ہیں۔ بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات کا انعقاد سب کی فتح ہے، بلدیاتی نمائندوں کا کام عوام کے بنیادی مسائل حل کرنا ہے، پنجاب اور سندھ میں پر امنانتخابات کا انعقاد خوش آئند ہے، پر امنانتخابات صوبائی حکومت کی امن و امان کی گرفت کا مظہر ہے۔ انہوں نے کہا کہ کامیاب ہونے والے امیدواروں کی اکثریت کا تعلق مسلم لیگ(ن) سے ہے،2013کے انتخابات کی شفافیت کی گواہی ہر فورم پر دی جا چکی ہے، کارکردگی پر عوام نے بلدیاتی انتخابات میں بھی مسلم لیگ (ن) کو ووٹ ڈالا، کل کے انتخابات میں عوام نے مسلم لیگ (ن) پر دوبارہ انتخابات کی مہر ثبت کی۔ انہوں نے کہا کہ چوہدری سرور کو ان کے استعفیٰ کا وعدہ یاد دلانا چاہتا ہوں، چوہدری آج تک این اے 122میں دھاندلی کے کوئی ثبوت پیش نہیں کئے۔ پرویز رشید نے کہا کہ انتخابی مہم کے دوران زندہ شیر کو لانے پر پابندی کا ہائیکورٹ کا فیصلہ درست ہے، لوگوں کو ہائیکورٹ کے فیصلے کا احترام کرنا چاہیے۔