- الإعلانات -

جلاوطن افراد کے حقوق کا تحفظ کیا جانا چاہیے،چوہدری نثار علی خان

وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے یورپی ممالک سے جلاوطن کیے جانے والے پاکستانیوں کے بنیادی انسانی حقوق کے تحفظ پر زور دیا ہے۔انھوں نے یہ بات پنجاب ہاو¿س میں پاکستان میں موجود جرمنی کے سفیر سے ایک ملاقات کے دوران کی، جس میں پاکستان اور جرمنی کے تعلقات، دوطرفہ تعاون، تارکین وطن کے دوبار داخلے پر پاک یورپی یونین معاہدے، انٹرنیشنل این جی اوز کی نئی پالیسی اور خطے کی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔تارکین وطن افراد کے دوبارہ داخلے کے حوالے سے چوہدری نثار نے کہا کہ جلاوطن کیے جانے والے افراد کے حوالے سے پاکستان کا مو¿قف یہ ہے کہ متعلقہ فریقین بین الاقوامی قوانین کی پاسداری کریں اور ملک بدر افراد کے بنیادی انسانی حقوق کا تحفظ بھی کیا جانا چاہیے۔انھوں نے کہا کہ ’ہم پاکستان یا دیگر ممالک کے امیگریشن قوانین کی خلاف ورزی میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی کو یقینی بنانے میں مصروف ہیں۔‘وفاقی وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ حکومت نے غیر ملکی تارکین وطن کے حوالے سے یورپی یونین کے خدشات تسلیم کیے ہیں اور اندرون اور بیرون ملک انسانی اسمگلنگ میں ملوث افراد کے خلاف کریک ڈاو¿ن کا ا?غاز کیا ہے تاکہ یورپی ممالک کے لیے غیر قانونی طریقے سے افراد کی نقل و حمل کو روکا جائے۔ان کا کہنا تھا کہ نئے طریقہ کار کے مطابق ملک بدر افراد سے تفتیش کی جائے گی تاکہ ان کو باہر بھیجنے والوں کے خلاف کریک ڈاو¿ن کی جاسکے۔انھوں نے مزید کہا کہ ملک بدر کیے جانے والے افراد کی نشاندہی پر حال ہی میں سینکٹروں انسانی اسمگلرز جن میں متعدد انتہائی مطلوب انسانی اسمگلرز اور اشتہاری شامل تھے کو گرفتار کیا گیا ہے۔چوہدری نثار نے کہا کہ بہت جلد تمام یورپی ممالک کے سفیروں کو دعوت دی جائے گی تاکہ وہ پاک-یورپ تعلقات کی مضبوطی، خاص طور پر سیکیورٹی اور باہمی تشویش کے مسائل سے نمٹنے کے عزم کا اعادہ کریں.ان کا کہنا تھا کہ پاکستان، جرمنی سے قائم دوستانہ تعلقات کی قدر کرتا ہے اور دونوں ممالک کے لیے مشترکہ فوائد کے لیے اسے مزید مضبوط بنانے کا خواہاں ہے۔ملک کی سوشل اکنامک ڈیولپمنٹ کے حوالے سے جرمنی کی جانب سے کی جانے والی مدد کو تسلیم کرتے ہوئے چوہدری نثار نے جرمنی کے سفیر کو یقین دہانی کروائی کہ وہ اس مدت کے دوران پاک جرمن مساوات مستحکم کرنے کے لیے ان کی کوششوں میں ہر ممکن مدد فراہم کریں گے۔انٹرنیشنل این جی اوز کے حوالے سے بنائی جانے والی نئی پالیسی پر چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ اس کا مقصد حکومت اور انٹر نیشنل این جی او کے درمیان تعلقات کو مضبوط بنانا ہے۔انھوں نے نئی پالیسی کے تحت انٹر نیشنل این جی اوز کی جانب سے رجسٹریشن کے لیے درخواستیں جمع کروانے کی حوصلہ افزائی بھی کی۔اس موقع پر جرمنی کی سفیر نے کہا کہ جرمنی پاکستان کے ساتھ تعلقات کو اہمیت دیتا ہے اور جرمنی کی حکومت اور عوام پاکستان کی حکومت اور عوام سے تعلقات کو مزید مضبوط کرنے کے خواہاں ہیں