- الإعلانات -

پاکستان ہمیشہ افغانستان کے ساتھ کھڑا ہے، وزیر اعظم

اسلام آباد: وزیر اعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ پاکستان خطے کے ممالک کے ساتھ مضبوط رابطے چاہتا ہے جبکہ پاکستان ہمیشہ افغانستان کے ساتھ کھڑا ہے اور اس کے دشمن ہمارے دشمن ہیں۔اسلام آباد میں وزیراعظم نواز شریف اور افغان صدر اشرف غنی نے 5ویں ہارٹ آف ایشیا استنبول پراسس کانفرنس کا باقاعدہ آغاز کیا۔کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ پاکستان ہارٹ آف ایشیا کانفرنس کے عمل کو سراہتا ہے، یہ کانفرنس استنبول کانفرنس کا تسلسل ہے جس کا مقصد خطے میں امن، انسانی اقدار اور علاقائی تعاون کا فروغ ہے۔انہوں نے کہا کہ خطے میں پائیدار امن کے لیے پ±رامن افغانستان ناگزیر ہے، افغانستان میں بدامنی ہوگی تو پورا ایشیا متاثر ہوگا اور وہاں امن سے پورا خطہ مستفید ہوگا، افغانستان میں مفاہمتی عمل کی حمایت کرتے ہیں اور افغان مہاجرین کی اپنے وطن باعزت واپسی چاہتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ افغانستان ایک خود مختار ملک ہے اور اس کی خود مختاری کا عالمی برادری بھی احترام کرتی ہے، پرامن ہمسائیگی ہی ہمارا ویڑن ہے اور پاکستان خطے کے ممالک کے ساتھ مضبوط رابطے چاہتا ہے، افغانستان کے دشمن پاکستان کے دشمن ہیں اور پاکستان ہمیشہ افغانستان کے ساتھ کھڑا ہے۔وزیر اعظم نے کہا کہ دہشت گردی ہم سب کی مشترکہ دشمن ہے اور اس سے نمٹنا سب کی مشترکہ ذمہ داری ہے، آپریشن ضرب عضب اور قومی ایکشن پلان کے مثبت نتائج ملے اور ہم اپنی سرزمین سے دہشت گردی کا خاتمہ چاہتے ہیں۔