- الإعلانات -

رینجرز کا وسیم اختر کے بارے میں اہم انکشاف

ینجرز نے سندھ ہائی کورٹ میں متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے رہنما وسیم اختر کے خلاف ہتک عزت کا دعوی دائر کر دیا۔رینجرز کی جانب سے دائر درخواست میں وسیم اختر کے خلاف 50 کروڑ روپے ہرجانے کے دعوے کے ساتھ موقف اختیار کیا گیا ہے کہ وسیم اختر نے رواں برس 29 ستمبر کو ایک ٹی وی شو میں رینجرز پر عیدالضحیٰ کے موقع پر قربانی کے جانوروں کی کھالیں چوری کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔درخواست میں یہ بھی کہا گیا کہ رینجرز وفاقی اور قابل احترام ادارہ ہے اور ایم کیو ایم رہنما کے اس بیان سے رینجرز کے وقار کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا۔رینجرز نے وسیم اختر کو مستقبل میں اس طرح کے بیانات سے روکنے اور عدالتی اخراجات وصول کرنے کی بھی استدعا کی۔عدالت نے وسیم اختر کو جواب کے ساتھ ذاتی طور پر آئندہ سماعت پر 21 دسمبر کو طلب کرلیا۔یاد رہے کہ رینجرز نے 26 اکتوبر کو وسیم اختر کو قانونی نوٹس جاری کیا تھا جس میں اپنا بیان ثابت کرنے کے لیے کہا گیا تھا