- الإعلانات -

کوئٹہ: نیب نے غبن کے الزام میں رکنِ صوبائی اسمبلی کو گرفتار کرلیا

کوئٹہ: قومی احتساب بیورو (نیب) نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور بلوچستان کے سابق وزیر خوراک میر اظہار حسین کھوسو کو غبن کے الزام میں گرفتار کر لیا۔

میر اظہار حسین کھوسو پاکستان مسلم لیگ (ن) کے ٹکٹ پر 2013 کے عام انتخابات میں صوبائی اسمبلی کی نشست پی بی 27 جعفرآباد سے رکن اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔

نیب ذرائع کے مطابق میر اظہار حسین کھوسو پر قومی خزانے کو 28 کروڑ روپے کا نقصان پہنچانے کا الزام ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزم نے عہدے کا غلط استعمال کرتے ہوئے قواعد و ضوابط اور میرٹ کی خلاف ورزی کرتے ہوئے سریاب روڈ پر واقع سرکاری فوڈ اسٹور میں گریڈ 6 میں ایک شخص کو بھرتی کروایا تھا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ مذکورہ اسٹور سے بعد میں 100 کلوگرام وزن گندم کے 65 ہزار بوریاں غائب ہوئیں۔

میر اظہار حسین کھوسو کو نیب کے ریجنل ہیڈ کوارٹر میں تفتیش کے لیے لے جایا گیا، تاہم نیب حکام انہیں کل احتساب عدالت میں پیش کریں گے جہاں ملزم کا ریمانڈ حاصل کرنے کے لیے استدعا کی جائے گی۔

واضح رہے کہ میر عبدالقدوس بزنجو کی جانب سے تحریک عدم اعتماد کے بعد جب نواب ثناء اللہ زہری وزارت عظمیٰ کے عہدے سے مستعفی ہوئے تو میر اظہار حسین کھوسو کو بھی کابینہ سے نکال دیا گیا تھا۔