- الإعلانات -

میونسپل کمیٹی چشتیاں نے عدالتی سٹے شدہ دکانیں دوبارہ نیلام کرنے کے لیے عدالتی احکامات ہوا میں اڑا دیے

شہر کے علاقہ لاری اڈہ کے عقب میں متنازعہ جگہ پر بلدیہ نے غیر قانونی قبضہ شروع کردیا۔پہلے سے الاٹ شدہ دکانوں کو دوبارہ الاٹ کرنے کے لیے قانونی احکامات کو بھی نظر انداز کردیا گیا۔ اس سے قبل بھی نیلام کرکے دکانداروں کو الاٹمنٹ کی گئی تھی جس کے بعد دوبارہ نیلامی کرنے کے خلاف دکانداروں نے عدالت سے سٹے آرڈر لے رکھا ہے۔لیکن بلدیہ چشتیاں نے عدالتی فیصلہ آئے بغیر ہی دکانیں دوبارہ الاٹ کرنے کی تیاریاں شروع کردیں۔جس کے باعث مطلوبہ جگہ پر قبضہ شروع کردیا ہے جس پر متاثرین شدید سراپا احتجاج بن گئے ہیں متاثرین کا کہنا کہ بلدیہ اور دکانداروں کا یہ معاملہ ابھی عدالت میں چل رہا ہے۔سٹے آرڈر ہونے کے باوجود بلدیہ کسی عدالتی حکم کو ماننے کو تیار نہیں۔متاثرہ دکانداروں نے ڈی۔سی بہاولنگر سے مطالبہ کیا ہے کہ بلدیہ کی اس من مانی کا نوٹس لیا جائے بصورت دیگر تمام دکانداروں نے بلدیہ کی غنڈہ گردی پر دھرنا دینے کا اعلان کردیا۔