- الإعلانات -

چین کی کمپنی ژاﺅمی نے اپنا نیا اسمارٹ فون متعارف کرا دیا ہے

چین کی کمپنی ژاﺅمی نے آئی فون اور سام سنگ کے گلیکسی ایس سیون کی ٹکر کا اپنا نیا اسمارٹ فون متعارف کرا دیا ہے۔

ژاﺅمی پہلے تو غیرمعروف کمپی تھی مگر چند برسوں کے دوران اس نے اپنے اسمارٹ فونز سے دنیا میں مقبولیت حاصل کی ہے اور اس کی نئی ڈیوائس می فائیو کو ماہرین نے رجحان ساز قرار دیا ہے۔

اس فون میں چینی کمپنی نے سابقہ ماڈلز کے مقابلے میں بہت زیادہ تبدیلیاں کی ہیں اور فزیکل ہوم بٹن اور فنگرپرنٹ سنسر بھی پیش کیے ہیں۔

یہاں تک کہ اس کا ایک خاص ایڈیشن میں بھی ہے جس میں فون کی مکمل باڈی سرامکس سے تیار کی گئی ہے۔

تاہم یہ ڈیوائس اس لیے اہم ہے کیونکہ یہ چینی کمپنی کی پہلی ڈیوائس ہے جو نئی مارکیٹوں میں بھی متعارف کرائی جائے گی۔

اسے یکم مارچ کو پہلے چین اور اس کے بعد انڈیا میں فروخت کے لیے پیش کیا جائے گا جس کے بعد یہ دنیا بھر میں فروخت کے لیے پیش کردیا جائے گا۔

اس فون کو بارسلونا میں جاری موبائل ورلڈ کانگریس اور بیجنگ میں الگ الگ ایونٹس میں متعارف کرایا گیا۔

یہ ڈیوائس دیکھنے میں سام سنگ نوٹ فائیو جیسی ہے تاہم اس کا خم زیادہ ہموار اور اس کے مقابلے میں زیادہ پتلی ہے۔

5.15 انچ اسکرین کو تھری ڈی گلاس باڈی سے تیار کیا گیا ہے، اس میں سنیپ ڈراگون 820 پراسیسر، 3000 ایم اے ایچ بیٹری، 16 میگا پکسلز کیمرے کے ساتھ 3 ورژنز کے ساتھ پیش کیا جائے گا۔

پہلا ورژن 1.8 گیگا ہرٹز سی پی وی کلاک اسپیڈ، تھری جی ریم اور 32 جی بی اسٹوریج، دوسرا ورژن 2.15 گیگا ہرٹز کلاک اسپیڈ اور 64 جی بی اسٹوریج کے ساتھ ہے۔

تیسرا ورژن می فائیو پرو 4 جی بی ریم اور 128 جی بی اسٹوریج کے ساتھ ہوگا۔

اس کے پہلے ورژن کی قیمت 262 ڈالرز (27 ہزار پاکستانی روپوں کے لگ بھگ) ہوگی جبکہ می فائیو پرو 354 ڈالرز میں فروخت کیا جائے گا۔