- الإعلانات -

دو جاپانی کمپینیوں نے خلاء میں قیام کیلئے بڑا منصوبہ بنا لیا

ٹوکیو : جاپانی گاڑی ساز ادارہ ہونڈا اور جاپان کی خلائی تحقیقی ایجنسی جاکسا خلاء میں آکسیجن، توانائی اور پانی پیدا کرنے کی غرض سے ایک نظام پر تحقیق شروع کرنے والے ہیں۔اس تحقیق کا مقصد خلا میں ایسا ماحول تخلیق کرنا ہے جس میں لوگ پہلے سے زیادہ دورانیے کیلئے قیام کرسکیں اور وہاں کام کرسکیں۔ہونڈا اور جاکسا انتظامیہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ یہ نظام خلا میں موجود انسانوں اور وہاں گھومنے پھرنے والی خلائی گاڑیوں کیلئے ناگزیر چیزیں تخلیق کرے گا تاکہ انہیں یہ اشیاء زمین سے حاصل کرنے کی ضرورت نہ رہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق شمسی توانائی کی مدد سے پانی کو اس کے اجزائے ترکیبی، آکسیجن اور ہائیڈروجن میں تبدیل کیا جائے گا۔پھر فیول سیل ٹیکنالوجی کی مدد سے اسی آکسیجن اور ہائیڈروجن سے بجلی بنائی جائے گی۔ اس عمل سے پیدا شدہ پانی کو دوبارہ قابل استعمال بنایا جائے گا۔واضح رہے کہ ہونڈا اور جاکسا رواں مالی سال کے اختتام تک اس نظام کا آزمائشی نمونہ تخلیق کرنے کا منصوبہ رکھتے ہیں۔