- الإعلانات -

واٹس ایپ کے نقصانات

اسلام آباد : دنیا بھر میں موبائل ٹیکنالوجی کا استعمال جیسے جیسے بڑھ رہا ہے ویسے ویسے ان چیزوں کے منفی استعمال میں بھی اضافہ ہوا ہے ۔ واٹس ایپ کا استعمال دنیا بھر میں رہنے والے لوگ تواتر سے کرتے ہیں اور اس چیز کا سامنے رکھتے ہوئے دھواکے باز لوگ ایسی تراکیب کا استعمال کرتے ہیں جن سے لوگوں کو لوٹا جاسکے،آئیے آپ کو چار ایسے دھوکوں کے بارے میں بتاتے ہیں جن سے آپ کو ہر صورت میں دوررہنا چاہیے۔
وائس میل
آپ کو ایک میسج آتا ہے کہ کسی نے آپ کے لئے وائس میل چھوڑی ہے اور جب آپ میسج میں دئیے گئے لنک کو کلک کرتے ہیں تو آپ کے فون پر کوئی اجنبی سائیٹ کوئی ایسا مشکوک سافٹ ویئر انسٹال کرنے کی کوشش کرتی ہے جو کہ آپ کا ڈیٹا چوری کرسکتی ہے۔اگر آپ کو کوئی ایسی ای میل آئے تو کبھی بھی مت کھولیں کیونکہ واٹس ایپ وائس میسج صرف ایپ کی مدد سے ہی لوگوں کو بھیجا جاتا ہے۔
ڈسکاﺅنٹ واﺅچرز
آپ کو ایسا میسج موصول ہوتا ہے جس میں بتایا جاتا ہے کہ آپ کوشاپنگ کے لئے ڈسکاﺅنٹ واﺅچرز دئیے جارہے ہیں اور آپ کو بس ایک مختصر سا سروے مکمل کرنا ہے۔آپ یہ جان کر بہت خوش بھی ہوتے ہیں اور جب لنک پر کلک کرتے ہیں اور اپنی تفصیلات ویب سائیٹ کو دے رہے ہوتے ہیں تو حقیقت میں یہ ہیکرز کو مل رہی ہوتی ہیں۔
پریمیم Version
آپ کو یہ پیغام دیا جاتا ہے کہ آپ ان چند خوش نصیبوں میں شامل ہیں جن کے لئے واٹس ایپ گولڈ کا یہ ورڑن دیا جارہا ہے لیکن جب آپ یہ انسٹال کرلیتے ہیں تو اس کے بعد آپ کو ہر بھیجے گئے میسج کے لئے پیسے دینے پڑتے ہیں۔
جاسوسی کرنے والی ایپ
صارفین کو یہ بتایا جاتا ہے کہ اس ایپ کے ذریعے آپ دوستوں کے درمیان ہونے والی بات چیت کو دیکھ سکتے ہیں۔آپ بخوشی اسے انسٹال کرتے ہیں تا کہ یہ جانا جاسکے کہ آپ کے دوست کیا باتیں کررہے ہیں۔یہ بات یاد رکھیں کہ اس طرح کی کوئی بھی ایپ نہیں جو دوسروں کی باتیں آپ کو بتاسکے لیکن اب ایک کام ہوچکا ہے اور وہ یہ کہ آپ کو اس ’جاسوس ایپ‘کی صورت میں پیسے دینے پڑ رہے ہیں۔تو قارئین خود بھی ہوشیار رہیں اور دوسروں کو بھی جدید ٹیکنالوجی کے منفی اثرات سے بچائیں ۔ ‎