- الإعلانات -

فیس بک واٹس ایپ کے لیے ڈیجیٹل کرنسی تیار کرنے میں مصروف

فیس بک نے رواں سال کے شروع میں کرپٹو کرنسی اشتہارات پر پابندی عائد کی تھی مگر یہ سوشل نیٹ ورک خود ڈیجیٹل کرنسی استعمال کرنے کے لیے تیار نظر آتا ہے۔

بلومبرگ کی ایک رپورٹ کے مطابق فیس بک کی جانب سے ایک ڈیجیٹل کرنسی تیار کی جارہی ہے جو کہ واٹس ایپ صارفین رقوم کی منتقلی کے لیے استعمال کرسکیں گے۔

اس کرینسی کو اسٹیبل کوائن کا نام دیا جارہا ہے اور اسے امریکی ڈالر سے منسلک کیا جائے گا جو اسے بٹ کوائن جیسی دیگر کرنسیوں کے مقابلے میں زیادہ مستحکم بنانے میں مدد دے گا۔

رپورٹ کے مطابق یہ کرنسی سب سے پہلے بھارت میں متعارف کرائی جاسکتی ہے جہاں واٹس ایپ کا منی ٹرانسفر فیچر کا ٹیسٹ کافی عرصے سے چل رہا ہے۔

واٹس ایپ کے بھارت میں 20 کروڑ سے زائد صارفین ہیں اور بھارتی شہریوں نے 2017 میں 69 ارب ڈالرز بیرون ملک سے اپنے ملک بھیجے تھے۔

یہ پہلا موقع نہیں کہ فیس بک کی جانب سے اس طرح کے کسی منصوبے پر کام کیا جارہا ہو۔

اس کمپنی نے رواں سال مئی میں میسنجر ایپ کے سابق سربراہ ڈیوڈ مارکوس کو بلاک چین ڈویژن کی سربراہی دی تھی جن کی ٹیم اس طرح کے منصوبوں پر کام کررہی ہے۔

اس وقت یہ ٹیم اسٹیبل کوائن کی حکمت عملی اور اس کے اثاثوں پر کام کررہی ہے جو کہ کرنسی کی ویلیو کو تحفظ فراہم کریں گے۔

یہ کرنسی ممکنہ طور پر کچھ عرصے تک متعارف ہونے کا امکان نہیں مگر فیس بک نے فی الحال اس حوالے سے خاموشی اختیار کی ہوئی ہے۔