کھیل

وزیراعظم سے قومی ورلڈ کپ اسکواڈ کی ملاقات

 اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے قومی ورلڈ کپ اسکواڈ سے ملاقات کرکے ان کی حوصلہ افزائی کی۔

وزیراعظم اور پی سی بی کے پیٹرن ان چیف عمران خان کی دعوت پر بنی گالہ میں پاکستانی ورلڈ کپ اسکواڈ نے عمران خان سے ملاقات کی۔ ان کے ہمراہ چیئرمین پی سی بی احسان مانی اور مینجمنٹ کے ارکان بھی موجود تھے۔ پی سی بی حکام نے وزیراعظم کو ورلڈ کپ کی تیاریوں کے حوالے سے بریفنگ دی۔

ذرائع کے مطابق عمران خان نے کھلاڑیوں کا حوصلہ بڑھاتے ہوئے کہا کہ انگلینڈ کی مشکل کنڈیشنز میں دلیری کے ساتھ کھیلنا ہوگا، سرفراز احمد کو قیادت کا حق ادا کرتے ہوئے خود ذمہ داری کا بوجھ اٹھانا ہوگا۔ عمران خان نے کپتان سرفراز کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ جب تم خود دلیر ہوگے تو ٹیم بھی دلیری کے ساتھ کھیلے گی۔

وزیراعظم نے کہا کہ 1992 کے ورلڈکپ میں قومی ٹیم کمزوریوں کے باوجود اپنے بے مثال جذبہ کی بدولت ٹائٹل جیتنے میں کامیاب ہوئی۔ اس موقع پر انہوں نے جنید خان، فہیم اشرف اور حسن علی سمیت بولرز کو کارکردگی بہتر بنانے کیلیے مفید مشورے بھی دیئے۔

چیف سلیکٹر نے اپنی بنائی ہوئی پالیسی کو بولڈ کردیا

لاہور: چیف سلیکٹر نے اپنی بنائی ہوئی پالیسی کو بولڈ کردیا اور انہوں نے فٹنس ٹیسٹ میں ناکام عماد وسیم کو تھوڑی ’’فیور‘‘ دینے کا اعتراف کرلیا۔

قذافی اسٹیڈیم لاہور میں ورلڈکپ اسکواڈ کا اعلان کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے کہا کہ ہم نے گزشتہ چند برس سے فٹنس کا ایک خاص معیار وضع کیا لیکن کبھی کبھار ٹیم کمبی نیشن کیلیے تھوڑا مشکل فیصلہ کرنا پڑ جاتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سچ ہے کہ عماد وسیم ٹیسٹ میں دیتے ہوئے ایک دو چیزوں میں تھوڑا پیچھے رہ گئے،گھٹنے کی انجری کے حوالے سے ڈاکٹر کی ہدایات بھی ہیں۔ ہم نے ان کو تھوڑی ’’فیور‘‘ دی اورامید ہے کہ وہ فٹ ہوجائیں گے، محمد حفیظ کی فٹنس کے حوالے سے بھی ایسی ہی توقعات وابستہ ہیں۔

محمد حسنین کو صرف رفتار کی وجہ سے تجربہ کار پیسرز پر ترجیح دینے کے سوال پر انھوں نے صحافی کو کہا کہ کبھی آپ نے 150کلومیٹر کی اسپیڈ سے آنے والی گیند کھیلی ہوتی تو بخوبی ہماری سلیکشن کی وجہ جان جاتے، حسن علی، جنید خان اور فہیم اشرف تجربہ کار ہیں لیکن ان کی رفتار ایک جیسی ہے۔ ان کے ساتھ کوئی ایکسپریس بولر ردھم میں آجائے تو کسی بھی ٹیم کی بیٹنگ تہس نہس کرسکتا ہے، محمد حسنین پاکستان ٹیم کا سرپرائز پیکیج ثابت ہوسکتے ہیں۔

محمد عامر کی اسکواڈ میں واپسی کے بارے میں بات کرتے ہوئے انضمام الحق نے کہا کہ پیسر ایک سال سے اچھا پرفارم نہیں کررہے لیکن ردھم میں آگئے تو بہت خوش آئند بات ہوگی، چیمپئنز ٹرافی فائنل میں انھوں نے بھارتی بیٹنگ لائن تباہ کردی تھی، اسی لیے ان کو انگلینڈ ساتھ لے کر جارہے ہیں، عثمان شنواری اور وہاب ریاض بھی اچھے بولر ہیں لیکن 8 پیسرز میں سے 5کو شامل کرنا ہو تو کسی نہ کسی کو ڈراپ کرنا ہی پڑے گا۔

اسکواڈ کا اعلان کرتے ہوئےانضمام بار بار غلطیاں کرتے رہے

ورلڈکپ کیلیے اسکواڈ کا اعلان کرتے ہوئے چیف سلیکٹر انضمام الحق بار بار غلطیاں کرتے رہے،پہلے فہرست میں حارث سہیل کا نام چھوڑ گئے، محمد حسنین کو ایم حسن کہہ گئے۔

صحافیوں نے تصحیح کرائی اور ساتھ یہ بھی بتایا کہ ابھی 14کرکٹرز کے نام لیے گئے ہیں،فہرست دوبارہ پڑھنا شروع کی تو اندازہ ہوا کہ حارث سہیل کا نام رہ گیا تھا، میڈیا کے نمائندوں نے کہا کہ کسی غلط فہمی سے بچنے کیلیے سارے نام دوبارہ پڑھ دیں،تیسری کوشش میں انضمام الحق پوری فہرست درست پڑھنے میں کامیاب ہوگئے۔

آسٹریلیا نے پاکستان کو نائٹ ٹیسٹ پر راضی کرلیا

کراچی:  آسٹریلیا نے پاکستان کو ایڈیلیڈ میں نائٹ ٹیسٹ کھیلنے پرراضی کرلیا تاہم ٹورکے دوران اضافی تیسرا پانچ روزہ میچ کھیلنے کی تجویز پر اتفاق نہیں ہوسکا۔

پاکستان نے رواں برس کے آخر میں شیڈول دورئہ آسٹریلیا کے دوران ایڈیلیڈ میں پنک گیند سے ڈے اینڈ نائٹ ٹیسٹ میچ کھیلنے پر رضامندی ظاہر کردی ہے۔ اس حوالے سے دونوں بورڈز کے درمیان بات چیت جاری اور اس سلسلے میں تاخیر کی وجہ پاکستان کا ٹور نہ کرنے کے آسٹریلوی فیصلے سے متعلق پی سی بی کی ناراضی کو قرار دیا جا رہا تھا، یہ بھی رپورٹس تھیں کہ پی سی بی کینگروز سے اگلے ٹور میں پاکستان میں کھیلنے کی یقین دہانی چاہتا ہے جو2022 میں شیڈول ہے۔

اس حوالے سے پاکستان کرکٹ بورڈ کے منیجنگ ڈائریکٹر وسیم خان نے ایک آسٹریلوی اخبار سے بات چیت میں کہاکہ ہم جانتے ہیں کہ آنے والے عرصے میں ہمیں مختلف ٹیموں سے بہت زیادہ باہمی کرکٹ کھیلنی ہے، ہمیں بدستور یہ ثبوت دینے کی ضرورت ہے کہ ہم اپنے ملک میں مقابلوں کے دوران بہترین سیکیورٹی فراہم کرسکتے ہیں، سب چیزیں بہتر رہنے پر ہم آسٹریلیا کے پاکستان میں کھیلنے سے متعلق بات چیت 2022 کے آغاز میں کریں گے۔ انھوں  نے کہا کہ کرکٹ آسٹریلیا پاکستان کو نائٹ ٹیسٹ کیلیے کوئی رقم نہیں دے گا۔

واضح رہے کہ پاکستان کی جانب سے دورئہ آسٹریلیا کے دوران 2 ٹور میچز کھیلنے کا امکان ہے جس میں سے ایک پرتھ میں پہلے ٹیسٹ سے قبل منعقد ہوگا، پی سی بی کو امید ہے کہ پرتھ کے فرسٹ گریڈ کلبز سے اس بارے میں ڈیل ہوجائے گی۔ ادھر کرکٹ آسٹریلیا نے اس بات کی بھی تصدیق کردی کہ 40 برس میں پہلی بار اس کی ٹیم جنوری میں ہوم سیزن کے دوران ہی بھارت کا ون ڈے سیریز کیلیے دورہ بھی کرے گی۔

ورلڈکپ کیلیے 15 رکنی قومی ٹیم کا اعلان، محمد عامر کو ڈراپ کردیا گیا

لاہور: قومی ٹیم کے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے ورلڈکپ 2019 اور دورہ انگلینڈ کے لیے قومی ٹیم کا اعلان کردیا۔ 

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے چیف سلیکٹر انضمام الحق نے ورلڈکپ 2019 کے لیے قومی ٹیم کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ورلڈکپ میں سرفراز احمد قومی ٹیم کی کپتانی کریں گے جب کہ دیگر کھلاڑیوں میں شاداب خان، عماد وسیم، فخرزمان، امام الحق، عابد علی، بابراعظم، شعیب ملک، محمد حفیظ، حارث سہیل حسن علی، فہیم اشرف، شاہین شاہ آفریدی، جنید خان اور محمد حسنین ہیں تاہم محمد حفیظ کی ورلڈکپ اسکواڈ میں شمولیت فٹنس سے مشروط ہے۔

چیف سلیکٹر نے کہا کہ محمد عامر اور آصف علی کو دورہ انگلینڈ کے لیے ٹیم کا حصہ بنایا گیا اور ہمارے پاس 23 اپریل تک موقع ہے کہ ہم ورلڈکپ اسکواڈ میں تبدیلی کرسکتے ہیں اور ان دونوں کھلاڑیوں کو کارکردگی کی بنیاد پر ورلڈکپ اسکواڈ میں شامل کیا جاسکتا ہے۔

ورلڈکپ کیلیے سری لنکن ٹیم کا اعلان

کولمبو: سری لنکن کرکٹ بورڈ نے ورلڈکپ کے لیے 15 رکنی اسکواڈ کا اعلان کردیا۔

سری لنکن کرکٹ بورڈ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹوئٹ کے ذریعے ورلڈکپ 2019 کے لیے 15 رکنی سری لنکن ٹیم کا اعلان کیا جب کہ میگا ایونٹ کے لیے ڈیموتھ کرارتنے کو کپتان مقرر کیا گیا ہے۔

سری لنکا کی ٹیم ڈیموتھ کرارتنے کی قیادت میں ملندا سری وردانا، جیون مینڈس، نوان پردیپ، انجیلو میتھیوز، کشال پریرا، لہیرو تھرمانے، تھسارا پریرا، اوشکا فرننڈو، کشال مینڈس، دھننجایا ڈی سلوا، لیستھ ملنگا، جیفری ویندرسے، ایسورو یودانا اور سرنگا لکمل پر مشتمل ہے۔

ورلڈکپ کے لیے جنوبی افریقا کے 15 رکنی اسکواڈ کا اعلان

کیپ ٹاﺅن: کرکٹ ورلڈکپ 2019 کے لیے جنوبی افریقا نے 15 رکنی اسکواڈ کا اعلان کردیا۔

چھ ہفتوں بعد 30 مئی سے شروع ہونے والے عالمی کپ کے لیے جنوبی افریقی اسکواڈ کا اعلان ہوگیا، ون ڈے ٹیم کے کپتان فاف ڈوپلیسی کو عالمی کے لیےٹیم کی قیادت سونپی گئی ہے۔

پندرہ رکنی اسکواڈ میں  کسی متبادل وکٹ کیپر کو شامل نہیں کیا گیاتاہم ڈی کک کی غیر موجودگی میں ڈیوڈ ملر وکٹ کیپر بنیں گے جب کہ تجربہ کار اوپنرہاشم آملہ پر سلیکٹرز نے بھرپور اعتماد کااظہار کرتے ہوئے خاطر خواہ پرفارمنس نہ دکھانے کے باوجود ٹیم کا حصہ بنایا گیا ہے۔

جنوبی افریقا کی 15 رکنی ٹیم میں کپتان فاف ڈوپلیسی، ڈیوائن پریٹورئیس، ڈیل اسٹین،  ایڈن مرکرام ، کوئنٹن ڈی کاک، ہاشم آملہ، تبریز شمسی، ڈیوڈ ملر، کاگیسو رباڈا، لنگی نگیدی، آنرچ نورٹج، فلکوایو، جے پی ڈومنی،عمران طاہر اوررسی وینڈر ڈسن ہیں۔

واضح رہے کہ ورلڈ کپ کا افتتاحی میچ میزبان انگلینڈ اور جنوبی افریقا کے مابین 30 مئی کو اوول کے میدان پر کھیلا جائے گا۔

پی سی بی گورننگ بورڈ اجلاس؛ وسیم خان کی ایم ڈی کی حیثیت سے تقرری کالعدم قرار

کوئٹہ: پاکستان کرکٹ کے گورننگ بورڈ اجلاس کے دوران ارکان نے وسیم خان کی ایم ڈی کی حیثیت سے تقرری کو کالعدم قرار دیدیا۔ 

کوئٹہ میں پہلی بار پی سی بی گورننگ بورڈ کا اجلاس ہوا جس میں 5 ارکان کے دستخطوں پر مشتمل قرار داد پیش کی گئی تاہم ارکان کے درمیان تلخ کلامی کے بعد گورننگ بورڈ کے اکثریتی اراکین نے اجلاس کا ایجنڈا مسترد کر دیا، ارکان نے مجوزہ ڈومیسٹک اسٹرکچر کا ڈھانچہ مسترد کرتے ہوئے کہا کہ مطالبات نہ مانے گئے تو بائیکاٹ کر دیں گے۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں گورننگ بورڈ کے اکثریتی اراکین نے وسیم خان کی ایم ڈی پی سی بی کی حیثیت سے تقرری کو بھی کالعدم قرار دے دیا۔

اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا کہنا تھا کہ بورڈ کا کام اتحاد پیدا رکھنا ہے، نفرتیں پیدا کرنا نہیں تاہم گورننگ بورڈ کی تجاویز ماننا نا ممکن ہے جب کہ ہم نے کرکٹ پرفارمنس کو بہترکرناہے۔

ورلڈ کپ 2019 اور پاکستان کے خلاف سیریز کے لیے میزبان انگلش ٹیم کا اعلان

لندن: انگلینڈ نے پاکستان کے خلاف سیریز اور آئی سی سی ورلڈ کپ کے لیے 15 رکنی اسکواڈ کا اعلان کردیا ہے۔

نیوزی لینڈ آسٹریلیا، بھارت اور بنگلا دیش کے بعد انگلینڈ نے بھی ورلڈ کپ کے لیے 15 رکنی حتمی اسکواڈ کا اعلان کردیا ہے۔ انگلش ٹیم کی قیادت ایون مورگن کریں گے۔

میزبان ٹیم میں جارحانہ اوپنرز جیسن روئے اور جونی بیرسٹو کے ساتھ الیکس ہیلز کو رکھا گیا ہے، تجربے کار جو روٹ، جو ڈینلے اور آئن مورگن مڈل آرڈر سنبھالیں گے، جوز بٹلر، بین اسٹوکس اور معین علی کو ہارڈ ہٹر کے طور پر ٹیم میں شامل کیا گیا ہے، عادل رشید اسپلشسٹ اسپنر جب کہ مارک ووڈ،کرس ووکس،ڈیوڈ ویلے اور لیام پلنکٹ اور ٹام کرن فاسٹ باولنگ کے فرائض سر انجام دیں گے۔

ویسٹ انڈین نژاد انگلش فاسٹ باولر جوفرا آرچر کو ورلڈ کپ اسکواڈ میں شامل نہیں کیا گیا تاہم وہ پاکستان کے خلاف ون ڈے سیریز میں پہلی بار انگلش یونی فارم میں ان ایکشن ہوں گے۔ پاکستان اور آئرلینڈ کے خلاف واحد ٹی 20 میں سیم بلنگز اور جیمز ونسے کو موقع دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ انگلش ٹیم 30 مئی کو ورلڈ کپ کے افتتاحی میچ میں جنوبی افریقا کے خلاف میدان میں اترے گی۔

Google Analytics Alternative