کھیل

سرفراز احمد بھی پاک فوج کے سپاہی بن گئے

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کے کپتان سرفراز احمد نے پی ایس ایل فور کی کامیابی کا جشن مناتے ہوئے آرمی کی وردی پہن لی۔

پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے پشاور زلمی کو شکست دے کر ٹائٹل اپنے نام کیا، ٹرافی کا تاج سر سجانے کے بعد کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے کامیابی کا جشن سب سے پہلے کوئٹہ میں منانے کا فیصلہ کیا اور اس سلسلے میں صوبائی حکومت نے ٹیم کے اعزاز میں خصوصی تقریب منعقد کی۔

یوم پاکستان 23 مارچ والے دن منعقد کی گئی خصوصی تقریب میں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی پوری ٹیم سمیت، کوچنگ اسٹاف اور ٹیم مالک بھی شریک ہوئے جب کہ تقریب میں وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان اور کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ بھی شریک ہوئے جب کہ تقریب کی خاص بات ٹیم کے کپتان سرفراز احمد تھے جو پاکستان آرمی کی وردی میں شریک ہوئے۔

کپتان سرفراز احمد نے پوری ٹیم کے ہمراہ بلوچستان کے لوگوں کے ساتھ ٹرافی کے ہمراہ جیت کا جشن منایا، اس موقع پر شہریوں کی بڑی تعداد نے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی ٹٰیم کا استقبال کیا جب کہ شہریوں نے کھلاڑیوں کے ساتھ سیلفیاں بھی بنائیں۔ دوسری جانب وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال نے اگلے پی ایس ایل کے دوران کوئٹہ میں میچز کروانے کا بھی عہد کیا

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی جانب سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر تصاویر بھی شیئر کی گئیں جن میں سرفراز احمد پاک فوج کی جیکٹ کے ہمراہ ٹوپی بھی پہنے ہوئے ہیں جب کہ اس موقع پر کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ اور ٹیم مالک سمیت دیگر شریک تھے۔

قومی کھلاڑیوں کے یوم پاکستان پر پیغامات: ‘پاکستان ہے تو ہم ہیں’

جذبہ حب الوطنی سے سرشار پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑیوں نے قوم کو یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی اور ملکی ترقی میں اپنا کردار ادا کرنے کے عزم کا اظہار کیا۔

پاکستان کی قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنا ویڈیو پیغام جاری کیا اور قوم کو یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی۔

سرفراز احمد نے کہا کہ ہمیں اللہ کا شکر ادا کرنا چاہیے کہ ہم پاکستان میں موجود ہیں اور پاکستانی کہلاتے ہیں، ملکی ترقی کے لیے مل جل کر کام کرنا ہماری ذمہ داری ہے۔قومی ٹیم کے کپتان کا کہنا تھا کہ پاکستان ہے تو ہم ہیں اور یہ پاکستان ہی ہماری پہنچان ہے۔

قومی کرکٹ ٹیم کے کوچ اظہر محمود نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی۔

انہوں نے کہا کہ جب میں اپنے قومی کرکٹ ٹیم کی جرسی پہنتا ہوں تو میرا دل خوشی سے پھول جاتا ہے۔

اظہر محمود نے قوم کی حفاظت کرنے اور ملک میں امن و امان کی صورتحال برقرار رکھنے پر مسلح افواج کو خراجِ تحسین بھی پیش کیا۔

جنید خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی۔

فاسٹ باؤلر نے کہا کہ پاکستان ان کا ملک ہے، یہاں یہ پیدا ہوئے ہیں اور اسی کے لیے اپنی جان دیں گے، یہی ملک ان کی پہچان ہے۔

فاسٹ باؤلر حسن علی نے بھی قوم کر یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی جدوجہدِ پاکستان کو انسانوں کی عظیم تاریخ قرار دیا۔

حسن علی نے سماجی رابطے ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں کہا کہ پاکستان کی کہانی، جدوجہد اور کامیابیاں اعلیٰ ظرف انسانی نظریات کی کہانی ہے۔

عمر گل نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے پیغام میں یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی اور یوم پاکستان کی پریڈ کو اپنے بچپن کی یادوں سے تعبیر کیا۔

انہوں نے کہا کہ مجھے آج یوم پاکستان کی پریڈ دیکھ کر اپنے بچپن کا زمانہ یاد آگیا جب ہم اپنے ملک کے لیے کچھ کر دکھانے کے لیے پرجوش ہوتے تھے۔

عمر گل نے کہا کہ خدا ہمارے وطن کو امن و ترقی کے ساتھ قائم و دائم رکھے۔

آل راؤنڈر شاداب خان نے ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کرتے ہوئے مشہور ملی نغمے کے شعر کو شیئر کیا۔

آل راؤنڈر عماد وسیم نے بھی اپنے ٹوئٹ میں یوم پاکستان کی مبارکباد پیش کی۔

اسپیٹڈ اسٹار شعیب اختر نے اپنے پیغام میں کہا کہ قائدِ اعظم محمد علی جناح اور علامہ اقبال نے اس روز قوم کو اس مقام تک پہنچا دیا جہاں ہم اپنے ملک میں آزاد زندگی گزار سکیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ آئیں آج یوم پاکستان پر ہم سب مل کر عہد کریں کہ متحد ہوکر اس ملک کی تعمیر کریں گے۔

محمد عامر کی مسلسل خراب پرفارمنس پر ٹیم انتظامیہ اور سلیکٹرز پریشان

لاہور: قومی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر محمد عامر کی خراب پرفارمنس نے ٹیم انتظامیہ اور سلیکٹرز کو پریشان کردیا ہے۔

مئی سے شروع ہونے والے ورلڈ کپ کیلئے پاکستانی ٹیم کا اعلان 12 اپریل کو پنڈی میں ختم ہونے والے پاکستان کپ کے بعدکیا جائے گا لیکن ورلڈ کپ سے 10 ہفتے قبل فاسٹ بولر محمد عامر کی مسلسل خراب فارم ٹیم انتظامیہ اور سلیکٹرز کے لئے پریشانی کا باعث ہے۔

محمد عامر کو پاکستانی ٹیم میں جگہ برقرار رکھنے میں مشکلات کا سامنا ہے جب کہ انہیں گزشتہ سال ستمبر میں ایشیا کپ کے بعد بھی پاکستانی ٹیم سے ڈراپ کیا گیا تھا۔

26 سالہ فاسٹ بولر کی بولنگ فارم مایوس کن حد تک خراب ہے، 18 جون 2017 کو اوول میں بھارت کے خلاف آئی سی سی چیمپنز ٹرافی فائنل کے بعد سے اب تک 14 ون ڈے انٹرنیشنل میں پانچ وکٹیں حاصل کی ہیں جب کہ 9 میچوں میں محمد عامر کوئی وکٹ حاصل نہیں کرسکے ہیں۔

آسٹریلیا کے خلاف شارجہ کے میچ میں محمد عامر نے 9 اوورز میں 59 رنز دیئے اور وہ وکٹ سے محروم رہے ہیں۔

ٹیم انتظامیہ محمد عامر کو مسلسل موقع دے رہی ہے، اس وقت پاکستان ٹیم میں جنید خان، عثمان شنواری اور محمدحسنین جیسے بولر موجود ہیں جس کے بعد توقع کی جارہی ہےکہ وہ آسٹریلیا کے خلاف ون ڈے سیریز میں ٹیم میں جگہ برقرار نہیں رکھ سکیں گے۔

دنیائے کرکٹ کا سب سے بڑا ایونٹ ورلڈ کپ 2019 صرف دو ماہ کی دوری پر ہے جس کے باعث اس سیریز نے بہت اہمیت اختیار کرلی ہے۔ پاکستان اور آسٹریلیا کی ٹیموں کے سلیکٹرز اس سیریز میں کھلاڑیوں کی کارکردگی کا قریب سے معائنہ کریں گے تاکہ اپنے ورلڈ کپ اسکواڈ کو حتمی شکل دی جاسکے۔

چیف سلیکٹر انضمام الحق بھی شارجہ پہنچ چکے ہیں، دونوں ٹیموں کے مابین کھیلی گئی ٹیسٹ اور ٹی ٹوئنٹی سیریز اکتوبر میں کھیلی گئی تھی جس میں پاکستان نے دو میچوں کی ٹیسٹ سیریز میں 0-1 سے فتح حاصل کی اور ٹی ٹوئنٹی سیریز بھی 0-3 سے اپنے نام کرنے میں کامیاب رہی۔

ون ڈے سیریز میں سلیکٹرز نے 6 صف اول کے کھلاڑیوں کو آرام دے کر بیک اپ ٹیلنٹ کو موقع دیا ہے۔

شاداب خان کی جگہ کھیلنے والے لیگ اسپنر یاسر شاہ نے دس اوورز میں 56 رنز دیئے اور کوئی وکٹ لینے میں کامیاب نہیں ہوسکے۔

پاکستان نے آسٹریلیا کے خلاف 2002 سے کوئی ون ڈے سیریز نہیں جیتی ہے، آسٹریلیا گلین میکس ویل اورناتھن کولٹی نائر کی جگہ ایشٹن ٹرنر اورپیٹ کمنز کی ٹیم میں شمولیت کا امکان ہے۔

بھارت کے خلاف سیریز میں آسٹریلیا نے دو صفر کے خسارے میں جانے کے بعد سیریز تین دو سے جیتی تھی۔

ورلڈکپ کے لیےقومی ٹیم کا اعلان اپریل کےدوسرے ہفتےمیں ہوگا

لاہور: تیس مئی سے انگلینڈ میں شروع ہونے والے ورلڈ کپ کے لیے پاکستانی ٹیم کا اعلان اپریل کےدوسرے ہفتےمیں ہوگا۔

چیف سلیکٹر انضمام الحق کا کہنا ہےکہ میگا ایونٹ سے پہلے دواپریل سے شروع ہونےو الے پاکستان ون ڈے کپ میں ان تمام کھلاڑیوں کو دیکھنا چاہتے ہیں جو اب تک قومی ٹیم کا حصہ نہیں بن پائے۔

انضمام الحق کا کہنا ہے کہ ہماری خواہش ہے کہ ورلڈکپ میں ایک بہترین کمبی نیشن کےساتھ جائیں  اس لیے پاکستان کپ میں سب کی پرفارمنس  پر نظر ہوگی، اگر کوئی ٹیلنٹڈ کھلاڑی ملاتو اسےضرور زیر غور لایاجائے گااس سے انداز ہ ہوجانا چاہیے کہ پاکستان کپ کی کتنی اہمیت ہے جب کہ ٹیموں کےانتخاب میں ان سب کرکٹرز کو سامنے رکھاگیاہے جو مختلف جگہ پرپرفارم کرتے آئے ہیں۔

کوئٹہ گلیڈی ایٹرز یوم پاکستان ٹرافی کے ہمراہ کوئٹہ میں منائے گی

پی ایس ایل فور کی فاتح کوئٹہ گلیڈیٹر کی ٹیم اپنی کامیابی کا جشن یوم پاکستان  کے موقعہ پر23 مارچ کو ٹرافی کے ہمراہ کوئٹہ میں اپنے پرستاروں اور مداحوں کے ساتھ منائے گی۔

کوئٹہ گلیڈیٹر کے روح رواں ندیم عمر کی قیادت میں فرنچائز کے قافلے میں کپتان سرفراز احمد، ہیڈ کوچ، سابق ٹیسٹ کپتان معین خان،احمد شہزاد،انورعلی، احسان علی اور ٹیم منیجر اعظم خان سمیت دیگر بھی شامل ہوں گے۔

اس حوالے سے ندیم عمر کا کہنا ہے کہ ہم لیگ میں میں شاندار فتح  کی خوشیوں کو کوئٹہ اپنے چاہنے والوں کے ساتھ باٹنے کے خواہش مند ہیں، ٹرافی کی آمد پر جشن کا سا سماں ہوگا،ہمیں اس بات پر بھی فخر ہے کہ ہماری فرنچائز کی جیت کی بدولت بدول  دنیا میں کوئٹہ اور بلوچستان کا نام روشن اور مثبت تاثرابھرا ہے، کوئٹہ گلیڈیٹر کی ٹیم وزیر اعلی بلوچستان جام کمال خان سے ملاقات کے ساتھ پاکستان آرمی کی سدرن کمانڈ کے سربراہ  لیفٹینینٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ سے ملے گی۔

دوسری جانب کامیابی پر ملک بھر میں خیرمقدم پر مسرور کپتان سرفراز احمد کا کہنا ہے کہ یوم پاکستان کے موقعہ پر کوئٹہ میں جشن مناکر خوشی دوبالا ہو جائے گی۔

رونالڈو، میسی ورلڈ کپ کے بعد پہلی مرتبہ قومی ٹیم میں شامل

ارجنٹینا کے لیونل میسی اور پرتگال کے کرسٹیانو رونالڈو فیفا ورلڈ کپ 2018 کے بعد پہلی مرتبہ اپنی قومی ٹیم کی جانب سے کھیلیں گے۔

غیر ملکی نشریاتی ادارے بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق لیونل میسی 29 مارچ کو میڈرڈ میں وینیزویلا کے خلاف دوستانہ میچ کا حصہ بنیں گے جبکہ رونالڈو پرتگال اوپننگ یورو 2020 کوالیفائر میں ہوم گراؤنڈ (لسبون) میں یوکرین کے خلاف میچ کھیلیں گے۔

دونوں کھلاڑیوں نے ورلڈ کپ کے بعد سے 6 عالمی میچز میں شرکت نہیں کی تھی۔

واضح رہے کہ رونالڈو کی قومی ٹیم پرتگال قومی لیگ کے سیمی فائنل میں ان کے بغیر پہنچ چکا ہے۔

34 سالہ رونالڈو نے 154 عالمی میچز میں 85 گولز کر رکھے ہیں اور وہ 25 مارچ کو سربیا میں پرتگال کے کھیل کا حصہ بھی بن سکتے ہیں۔

رونالڈو کے ساتھ اطالوی کلب یووینٹس میں کھیلنے والے پرتگالی ڈیفینڈر جاو کینسیلو نے ان کی قومی ٹیم میں واپسی پر خوشی کا اظہار کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ کرسٹیانو کسی بھی ٹیم میں جان ڈالتے ہیں، ان کے ساتھ کھیلنے کی خوشی ہے، وہ ہمارے لیے بہت اہم ہیں‘۔ دوسری جانب 31 سالہ میسی نے 128 میچز میں 65 گولز کیے ہیں۔

ارجنٹینا ٹیم کے سربراہ لیونل شالونی نے میسی کی قومی ٹیم میں واپسی پر کہا ہے کہ ’یہ میرے لیے اور سب کے لیے بہت خوشی کی بات ہے کہ وہ واپس آگئے، ہم سب بہت خوش ہیں‘۔

انٹرنیشنل فٹبال سے خودساختہ علیحدگی اختیار کرنے والے میسی کی واپسی کی خبر پر وینیزویلا کے کوچ رافائل ڈوڈامیل نے بھی خوشی کا اظہار کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ’دنیا کے بہترین کھلاڑی کی موجودگی سے کھیل کی امیدیں مزید بڑھیں گی‘۔

نوجوان انگلش کرکٹر نے 25گیندوں پر سنچری اسکور کردی

انگلش کاؤنٹی میں سرے کے اوپنر وِل جیکس نے لنکاشائر کے خلاف 10اوور کے میچ میں 25 گیندوں پر سنچری اسکور کرکے نئی تاریخ رقم کردی۔

یہ اب تک دو پیشہ ورانہ ٹیموں کے درمیان میچ کی سب سے تیز ترین سنچری اسکور قرار دیا جا رہا ہے تاہم آفیشل میچ نہ ہونے کے سبب جیکس عالمی ریکارڈ قائم نہ کر سکے۔

کرکٹ میں تیز ترین سنچری کا عالمی ریکارڈ ویسٹ انڈین بلے باز کرس گیل کے پاس ہے جنہوں نے 2013 میں انڈین پریمیئر لیگ میں 31 گیندوں پر سنچری بنا کر ریکارڈ بک میں اپنا نام درج کرایا تھا۔

تاہم اس سنچری کے ساتھ ہی انہوں نے ٹی10 میں سب سے بڑے اسکور کا ریکارڈ بنا دیا جو اس سے قبل ایلکس ہیلز کے پاس تھا جنہوں نے گزشتہ سال 87 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔

جیکس نے مجموعی طور پر 30 گیندوں پر 105 رنز کی اننگز کھیلی جس میں 8 چوکے اور ایک اوور میں مارے گئے 6 چھکوں سمیت 11 چھکے شامل ہیں۔

ان کی اس اننگز کی بدولت سرے نے تین وکٹوں کے نقصان پر 176رنز بنائے جس کے جواب میں لنکاشائر کی ٹیم 9وکٹوں کے نقصان پر 81رنز ہی بنا سکی۔

اپنے اس کارنامے کے بارے میں گفتگو کرتے ہوئے جیکس نے کہا کہ جب تک وہ 98 کے اسکور تک نہیں پہنچے تھے، اس وقت تک انہوں نے سنچری کے بارے میں سوچا تک نہیں تھا، یہ سب کچھ انتہائی جلدی میں ہوا۔

20سالہ جیکس نے گزشتہ سال سرے کے لیے فرسٹ کلاس، ٹی20 اور لسٹ اے میں ڈیبیو کیا تھا اور گلوسٹر شائر کے خلاف رائل لندن کپ کے میچ میں 100 گیندوں پر 121 رنز کی شاندار اننگز کھیلی تھی۔

عالمی کرکٹ میں تیز ترین سنچری کا ریکارڈ سابق جنوبی افریقی بلے باز اے بی ڈی ویلیئرز کے پاس ہے جنہوں نے 2015 میں ویسٹ انڈیز کے خلاف ون ڈے میچ میں 31گیندوں پر سنچری بنائی تھی۔

ملک میں جلد انٹرنیشنل کرکٹ ٹورنامنٹس ہوں گے، سرفراز احمد

کراچی:  پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے کہا ہے کہ پی ایس ایل فور کا بہترین انعقاد ہم سب کی کامیابی ہے تاہم وہ دن دور نہیں جب ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ ٹورنامنٹس ہوں گے۔

سرفراز احمد نے پی آئی اے ٹاؤن شپ میں شجرکاری مہم کے موقع پرمختصرگفتگومیں کہا کہ عوام سے ملنے والی محبتوں پر بہت ان کا بہت شکرگزار ہوں تاہم وہ دن دور نہیں جب ملک میں انٹرنیشنل کرکٹ ٹورنامنٹس ہوں گے۔

پی ایس ایل فورمیں فتح پانے والی کوئٹہ گلیڈی ایٹرزکی قیادت کرنے والے سرفراز احمد نے کہا کہ پاکستان میں لوگوں کاکرکٹ سے والہانہ لگائو اور وہ اس کھیل سے محبت کرتے ہیں، فائنل میں کراچی کے بہترین کراؤڈ کے سامنے کامیابی کا لطف آیا، مستقبل میں پاکستان کرکٹ میں مزید کامیابیاں حاصل کرے گا۔

اس موقع پر سابق ٹیسٹ کپتان اور اپنے دورکے عظیم آل رائونڈر وسیم اکرم نے کہا کہ پاکستان میں انٹرنیشل کرکٹ کی راہیں کھل رہی ہیں، غیرملکی کرکٹرزکا کراچی آنا مثبت پیشرفت ہے، ثابت ہوگیا کہ پاکستان پُرامن ملک ہے۔

انھوں نے کہا کہ آئی سی سی کے چیئرمین نے بھی پاکستان میں سیکیورٹی کے حوالے سے معاملات پر اطمینان کا اظہار کردیا، امید ہے کہ اگلے برس لیگ زیادہ شاندارانداز میں ہوگی۔

Google Analytics Alternative