- الإعلانات -

خواہش ہے پاکستان ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کی دو بہترین ٹیموں میں شامل ہو، مصباح الحق

قومی ٹیم کے ہیڈکوچ وچیف سلیکٹر مصباح الحق کا کہنا ہے کہ خواہش ہے پاکستان کرکٹ ٹیم آئی سی سی ورلڈٹیسٹ چیمپئن شپ کی دو بہترین ٹیموں میں شامل ہو۔

لاہور کے قذافی اسٹیٹیم میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے قومی ٹیم کے چیف سلیکٹر مصباح الحق نے کہا کہ بنگلادیش کے خلاف منتخب کردہ ٹیم دستیاب بہترین کھلاڑیوں پر مشتمل ہے، جس طرح سری لنکا کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں ان لڑکوں نے بہترین کارکردگی دکھائی تھی، یقین ہے کہ اب بنگلا دیش کے خلاف بھی یہ ٹیم شاندار پرفارمنس دے گی۔

قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ وچیف سلیکٹر مصباح الحق نے کہا کہ یقینا اسکواڈ سے ڈراپ ہونے پر کاشف بھٹی اور عثمان شنواری مایوس ہوں گے مگر یقین دلاتے ہیں کہ کاشف بھٹی اور عثمان شنواری، طویل طرز کی کرکٹ میں ہماری مستقبل کے حوالے سے حکمت عملی کا مکمل حصہ ہیں۔ بنگلا دیش کرکٹ ٹیم کے ٹاپ اور مڈل آرڈر میں بائیں ہاتھ کے بلے بازوں کی کثیر تعداد ہونے کے باعث کاشف بھٹی کی جگہ دائیں ہاتھ  کے آف اسپنر بلال آصف کو اسکواڈ میں شامل کیا گیا ہے۔

مصباح الحق نے کہا کہ فہیم اشرف کو آل راؤنڈ صلاحیت کی بنیاد پر عثمان شنواری پر ترجیح دی گئی ہے، کراچی میں فتح کے بعد وہ اسکواڈ میں زیادہ تبدیلیوں کے حق میں نہیں تھے مگر وکٹ کو پیش نظر رکھتے ہوئے اپنی تیاری مکمل رکھنے کا فیصلہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ سری لنکا کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں کامیابی سے پاکستان نے 2019 کا فاتحانہ اختتام کیا جب کہ 2020 کی پہلی سیریز میں بھی پاکستان نے بنگلا دیش کو ٹی ٹونٹی سیریز میں شکست دی، امید ہیں کہ پاکستان ٹیسٹ کرکٹ ٹیم،  بنگلادیش کے خلاف ٹیسٹ سیریز کا آغاز بھی فتح سے ہوگا۔

چیف سلیکٹر نے کہا کہ ان کا ہدف آئی سی سی ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ میں زیادہ سے زیادہ پوائنٹس حاصل کرنا ہے، خواہش ہے پاکستان کرکٹ ٹیم آئی سی سی ورلڈٹیسٹ چیمپئن شپ کی دو بہترین ٹیموں میں شامل ہو۔ پاکستان کرکٹ ٹیم 3 فروری کو راولپنڈی روانہ ہوگی جہاں قومی اسکواڈ ٹریننگ کا آغاز 4  فروری کو کرے گا۔