- الإعلانات -

نسیم شاہ اور مجھ میں رقابت ٹیم کیلیے فائدہ مند ہے، شاہین آفریدی

لاہور: 

شاہین آفریدی نے کہا ہے کہ نسیم شاہ اور ان میں رقابت ٹیم کیلیے فائدہ مند ہے۔

پاکستان اور بنگلہ دیش کے درمیان آئی سی سی ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کا پہلا میچ 7 فروری سے پنڈی کرکٹ اسٹیڈیم راولپنڈی میں کھیلا جائیگا، یہ وہی مقام ہے جہاں 19 سالہ ٹیسٹ فاسٹ بولر شاہین شاہ آفریدی نے سری لنکا کے ڈیموتھ کرونا رتنے کوپویلین کی راہ دکھائی تھی، شاہین شاہ آفریدی کی یہ وکٹ ہمیشہ منفرد رہے گی کیونکہ 10سال بعد پاکستان میں کھیلے گئے ٹیسٹ میچ کے دوران کسی بھی بولرکی جانب سے حاصل کردہ یہ پہلی وکٹ تھی۔

سری لنکا کے خلاف ٹیسٹ میچ کے تقریباً 2 ماہ بعد اب پنڈی کرکٹ اسٹیڈیم راولپنڈی کو بنگلہ دیش اور پاکستان کے درمیان ٹیسٹ میچ کی میزبانی کرنا ہے۔ شاہین شاہ آفریدی یہاں بھی فائنل الیون کا حصہ بننے کے لیے مضبوط امیدوار ہیں اور وہ ایک بار پھر ہوم گراؤنڈ پر تیز رفتار گیندوں سے حریف کھلاڑیوں پردھاک بٹھانے کے لیے تیار ہیں۔

شاہین شاہ آفریدی نے سری لنکا سے میچ کی یادوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ جب پہلی اننگز میں، میں نے 5 وکٹیں حاصل کیں تو نسیم شاہ بوجھل دل کے ساتھ ان کے پاس آئے اور کہنے لگے کہ وہ پہلی اننگز میں اچھی بولنگ کے باوجود زیادہ وکٹیں حاصل نہ کرنے پر مایوسی کا شکار ہیں، میں نے اس موقع پر ساتھی پیسر کی ہمت بندھائی، انھیں یقین دلایا کہ اچھی بولنگ کا ثمر انھیں جلد ملے گا۔

شاہین شاہ آفریدی نے کہا کہ نسیم شاہ اور ان کے درمیان زیادہ سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے کے لیے ایک مثبت رقابت رہتی ہے جو ٹیم اور بولرزدونوں کی کارکردگی میں بہتری لانے کے لیے اہمیت کی حامل ہے۔ نسیم شاہ نے جب دوسری اننگز میں سری لنکا کے 5 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی تو پھر شاہین نے ان کی حوصلہ افزائی کی تھی۔

شاہین آفریدی نے مزید کہا کہ نسیم شاہ میں وکٹیں حاصل کرنے کی بھوک ہے اور مثبت پہلو یہ ہے کہ وہ ہر طرح کی وکٹ پر طویل اسپیل کرنے کے صلاحیت رکھتے ہیں، ماضی میں وسیم اکرم اور وقار یونس کے درمیان بھی زیادہ سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے کی جنگ رہتی تھی،جس کا فائدہ پاکستان کو ہوا۔

شاہین شاہ آفریدی نے کہا ہے کہ 2 ماہ قبل راولپنڈی میں کھیلے گئے ٹیسٹ میچ کے دوران تماشائیوں کا شوراس قدر زیادہ تھا کہ ہمیں ٹی ٹوئنٹی میچ کا گمان ہونے لگا،انھوں نے کہا کہ ہوم گراؤنڈ اورکراؤڈ سے دورکرکٹ کھیلنے کے باعث مجھے اس جوش و جذبے کی اہمیت کا خوب اندازہ ہے۔

اس موقع پر سری لنکا کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میچ میں 5 وکٹیں حاصل کرنے والے شاہین شاہ آفریدی نے کہا کہ ٹیسٹ کیرئیر میں یہ کارنامہ پہلی بار انجام دینے پر مجھے خوشی ہے تاہم سونے پہ سہاگہ یہ کہ میری یہ پرفارمنس ہوم گراؤنڈ پر ہوئی۔