- الإعلانات -

ساتویں ویمنز ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ میں فرنٹ فٹ نو بال ٹیکنالوجی استعمال کی جائے گی، آئی سی سی

 ساتویں آئی سی سی ویمنز ٹی ٹونٹی کرکٹ ورلڈ کپ میں پہلی بار فرنٹ فٹ نو بال ٹیکنالوجی استعمال کی جائے گی۔ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کے مطابق بین الاقوامی سطح پر حال ہی میں کامیاب ٹرائلز کے بعد کسی بڑے ٹورنامنٹ میں فرنٹ فٹ نو بال کا قانون استعمال کیا جائے گا۔ اس کے نتیجے میں تھرڈ ایمپائر رواں ماہ آسٹریلیا میں شروع ہونے والے آئی سی سی ویمن ٹی 20 ورلڈ کپ میں ہر گیند کیلئے فرنٹ فٹ لینڈنگ پوزیشن کی نگرانی کرے گا۔ آن فیلڈ ایمپائرز اگلے حصے پر کسی بھی بال پر فوکس نہیں کریں گے جب تک کہ تیسرے ایمپائر کے ذریعہ ایسا کرنے کا مشورہ نہ دیا جائے، اگر کوئی بال نہیں دیکھا گیا تو وہ فوری طور پر بات چیت کرے گا تاہم آن فیلڈ ایمپائر اب بھی دوسری قسم کی نو بال کو کال کرنے کا ذمہ دار ہوں گے۔ اس ٹیکنالوجی کو دسمبر 2019ء میں بھارت اور ویسٹ انڈیز کے درمیان سیریز کے دوران آزمائشی طور پر استعمال کیا گیا تھا۔ آئی سی سی کے مطابق اس ٹیکنالوجی کو 12 کھیلوں میں آزمایا گیا جس میں 4717 گیندیں کرائی گئیں۔ آئی سی سی کے جنرل منیجر جیف ایلارڈائس نے بتایا کہ مجھے یقین ہے کہ اس ٹیکنالوجی سے آئی سی سی ویمنز ٹی 20 ورلڈ کپ میں فرنٹ فوٹ بال کی غلطیاں کم ہو جائیں گی۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے پہلی بار انگلینڈ اور پاکستان کے مابین 2016ء میں ون ڈے سیریز میں اس تیکنالوجی کو آزمایا تھا اور اب اس میں نمایاں بہتری آئی ہے