- الإعلانات -

دنیا کا سب سے زیادہ ‘غیرپیشہ ورانہ’ بورڈ قرار, آل راؤنڈر ڈیوین براوو

ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کی فاتح ویسٹ انڈین ٹیم کے اہم رکن اور مایہ ناز آل راؤنڈر ڈیوین براوو نے اپنے ملک کے کرکٹ بورڈ کو دنیا کا سب سے زیادہ ‘غیرپیشہ ورانہ’ بورڈ قرار دیا ہے۔

مشہور آل راؤنڈر نے ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کے صدر ڈیو کیمرون کو انتہائی متکبر اور نادان شخص قرار دیا ہے۔

ویسٹ انڈیز نے اتوار کو کولکتہ کے ایڈن گارڈنز میں کھیلے گئے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے فائنل میں سنسنی خیز مقابلے کے بعد ویسٹ انڈیز کو چار وکٹوں سے شکست دے کر دوسری مرتبہ چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کیا تھا۔

32 سالہ براوو نے کہا کہ جب ہماری ٹیم ایونٹ کھیلنے آئی تو ہماری کٹ بھی تیار نہیں تھی اور ہم نے کیپ کے بغیر پورا ٹورنامنٹ کھیلا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ ہم ہندوستان آئے تو ہمارے یونیفارم پر نام تک پرنٹ نہیں تھے، ہمارے منیجر کو شرٹوں پر نام اور نمبر پرنٹ کرانے کیلئے باہر جانا پڑا۔

یاد رہے کہ ویسٹ انڈین کھلاڑیوں اور بورڈ کے درمیان ایک عرصے سے تناؤ جاری ہے اور اس طرح کے بیان سے صورتحال مزید بگڑ سکتی ہے حالانکہ ویسٹ انڈین بورڈ نے ٹیم کے چیمپیئن بننے کے بعد گھٹنے ٹیکتے ہوئے انڈین پریمیئر لیگ کے بعد کھلاڑیوں سے مذاکرات کرنے کا اعلان کیا تھا۔

ویسٹ انڈین کپتان ڈیرن سیمی نے بھی ورلڈ ٹی ٹوئنٹی جیتنے کے بعد اپنے خطاب میں کرکٹ بورڈ کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا تھا۔

براوو نے ٹرینیڈاڈ اینڈ ٹوباگو کے ٹیلی ویژن سی این سی3 سے گفتگو کرتے ہوئے کھلاڑیوں کو ورلڈ ٹی ٹوئنٹی سے قبل شدید تنقید کا سامنا کرنا پڑا، ہماری دیانتداری پر سوالات اٹھائے گئے، ہم سے سوالات کیے گئے کہ کیا ہم ویسٹ انڈیز کرکٹ سے دل سے جڑے ہوئے ہیں یا پھر یہ محض پیسے کا معاملہ ہے۔

براوو نے افسردگی سے کہا کہ بہت سے لوگ نہیں سمجھ سکتے کہ بورڈ کے ساتھ ناروا سلوک کی وجہ سے کھلاڑی کس صورتحال اور اذیت سے گزرے۔