- الإعلانات -

شاہد آفریدی کہتے ہیں کہ ٹیم میں کوئی دلیر کھلاڑی نہیں تھا

بزدل کھلاڑی،شاہد آفریدی نے ایک اورتنازعہ کھڑا کردیا،سابق کپتان شاہد آفریدی نے قومی کرکٹ ٹیم کی کپتانی کے بہت سے امیدواروں کے باوجود نیا تنازعہ کھڑا کردیاکہتے ہیں کہ پہلے کپتانی چھوڑنے کا ارادہ کر لیا تھا تاہم اس وقت ٹیم میں کوئی دلیر کھلاڑی نہیں تھا،پاکستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی نے کہاہے کہ انہوں نے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی سے پہلے ہی کپتانی چھوڑنے کا ارادہ کر لیا تھالیکن ٹیم میں کوئی دلیر نہیں تھا جو کپتانی کا بوجھ اٹھاتا ٗوہ بھی نیوزی لینڈ کی سیریز سے پہلے قیادت چھوڑ دیتے تو لوگ کہتے کپتان بھاگ گیا۔ایک انٹرویو میں شاہد آفریدی نے کہا کہ عمر اکمل اور احمد شہزاد اپنی غلطیوں کا احساس کریں ٗماضی کو بھول جائیں اور ٹیم میں واپسی کیلئے زیادہ محنت کریں۔آفریدی 22 مئی کو کاؤنٹی کھیلنے جائیں گے۔سابق کپتان نے بتایا کہ وہ انگلینڈ میں اپنی فٹنس پر کام کریں گے اور اپنی فارم سے سلیکٹرز کا اعتماد حاصل کر کے قومی ٹیم میں واپس آئیں گے۔آفریدی نے کہا کہ انہوں نے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی سے پہلے کپتانی چھوڑنے کا ارادہ کر لیا تھا تاہم اس وقت ٹیم میں کوئی دلیر کھلاڑی نہیں تھا،اگر وہ کپتانی چھوڑ دیتے تو لوگ کہتے کپتان بھاگ گیا۔