- الإعلانات -

رونالڈو کا غصہ کسی کی “جان بچانے” کے کام آگیا

دنیائے فٹ بال کے عظیم کھلاڑی کرسٹینارونالڈو آئے روز خبروں کی زینت بنے رہتے ہیں، کھبی اپنے مخصوص انداز میں جشن منانے پر تو کھبی میچ ریفری کے ساتھ الجھنے پر، تاہم اس بار وہ جس وجہ سے شہہ سرخیوں میں آئے، پڑھ کر آپ بھی نہایت خوش ہونگے۔

گذشتہ ماہ اٹھائیس مارچ کو ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ کیلئے پرتگال اور سربیا کے درمیان مقابلہ ہوا، جو کہ 2-2 گول سے برابر رہا، میچ کی اہم بات یہ تھی کہ میچ کے آخری لمحات میں کرسٹیانو رونالڈو نے شاندار گول کیا جسے امپائر نے ماننے سے انکار کیا۔

رونالڈو نے گول نہ ماننے پر امپائر کے سامنے شدید احتجاج کیا اور غصے کی حالت میدان سے باہر چلے گئے، میدان سے باہر جاتے ہوئے رونالڈو نے اپنے بازو پر بندھا آرم بینڈ گراؤنڈ میں پھینک دیا تھا۔

کسی کے وہم وگمان میں بھی نہ تھا کہ رونالڈو کے غصے کی حالت میں پھینکا جانے والا آرم بینڈ 75 ہزار ڈالرز میں فروخت ہوگا اور کسی کی جان بچانے کے کام آئے گا۔اس کہانی کا پس منظر یہ ہے کہ سربیا سے میچ کے دوران جب پرتگالی قائد نے غصے کی حالت میں اپنا آرم بینڈ میدان میں پھینکا تو مقامی فائرمین نے اسے اٹھالیا۔

اسی دوران سوشل میڈیا پر سربیا کے انسانی ہمدردی گروپ نے ریڑھ کی ہڈیوں کے مرض میں مبتلا چھ ماہ کے کمسن بچے کے علاج کے لئے رقم جمع کرنے کی مہم شروع کی، تین دن جاری رہنے والی اس مہم میں کچھ شرکا نے غیر حقیقت پسندانہ طریقہ اختیار کرتے ہوئے بڑی رقم دینے کا اعلان کیا اور نیکی کے اس عمل کو متاثر کرنے کی کوشش کی، جعلی بولی لگانے پر عوام میں شدید غم و غصہ بھی پھیلا۔

فٹ بال گراؤنڈ میں ڈیوٹی دینے والے فائر مین کو اس چیئریٹی مہم کا علم تھا، جس نے فوری طور پر رونالڈو کے آرم بینڈ کو چیئریٹی گروپ کے حوالے کردیا جو کہ ریکارڈ 75 ہزار ڈالرز میں نیلام ہوگیا۔

رونالڈو کے آرم بینڈ کی نیلامی سے حاصل شدہ رقم چھ ماہ کی بچی کے علاج پر خرچ کی جائے گی۔