- الإعلانات -

پاکستان کا ٹاس جیت کر پہلے بیٹینگ کرنے کا فیصلہ۔

پاکستان نے انگلینڈ کے خلاف چار کرکٹ ٹیسٹ میچوں کی سیریز کے پہلے میچ میں پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

لندن کے تاریخی کرکٹ میدان لارڈز میں کھیلے جانے والے اس میچ میں پاکستانی کپتان مصباح الحق نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا۔

اس موقع پر ان کا کہنا تھا کہ پاکستانی بلے بازوں پر کوئی دباؤ نہیں اور وہ انگلش ٹیم کے خلاف ایک بڑا سکور کرنے کی کوشش کریں گے۔

پاکستان نے اس میچ میں تین لیفٹ آرم فاسٹ بولروں محمد عامر، وہاب ریاض اور راحت علی کو کھلانے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ سپن کے شعبے میں ان کا ساتھ لیگ سپنر یاسر شاہ دیں گے۔

ان کے علاوہ پاکستانی ٹیم میں محمد حفیظ، شان مسعود، اظہر علی، یونس خان، کپتان مصباح الحق، سرفراز احمد اور اسد شفیق شامل ہیں۔

پاکستانی بلے بازوں میں صرف محمد حفیظ، یونس خان اور اظہر علی کو اس سے قبل انگلینڈ میں ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے کا تجربہ ہے۔
Image captionمحمد عامر انٹرنیشنل کرکٹ میں واپسی کے بعد اپنا پہلا ٹیسٹ میچ اسی میدان پر کھیل رہے ہیں جہاں انھوں نے پابندی سے قبل آخری ٹیسٹ کھیلا تھا

پاکستانی کرکٹ ٹیم کو لارڈز ٹیسٹ میں انگلش بولر جیمز اینڈرسن کا سامنا نہیں کرنا پڑ رہا ہے جو ان فٹ ہیں اور ان کی جگہ جیک بال کو ملی ہے جو اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلیں گے۔

ان کے علاوہ یہ میچ کھیلنے والے انگلش کھلاڑیوں میں الیسٹر کک، ایلکس ہیلز، جو روٹ، جیمز ونس، گیری بیلنس، جونی بیرسٹو، معین علی، کرس ووکس، سٹوئرٹ براڈ اور سٹیفن فن شامل ہیں۔

پاکستان کی ٹیم سنہ 2010 میں سپاٹ فکسنگ سکینڈل کے بعدپہلی مرتبہ انگلینڈ کے دورے پر آئی ہے۔

سپاٹ فکسنگ سکینڈل چھ برس قبل لارڈز ہی میں کھیلے جانے والے ٹیسٹ میچ میں سامنے آیا تھا جس میں ملوث تینوں پاکستانی کرکٹرز سلمان بٹ، محمد آصف اور محمد عامر کو سزائیں ہوئی تھیں۔

ان میں سے محمد عامر کی انٹرنیشنل کرکٹ میں واپسی ہو چکی ہے اور وہ واپسی کے بعد پہلی بار اسی میدان پر دوبارہ ٹیسٹ میچ کھیل رہے ہیں۔

پاکستانی کرکٹ ٹیم لارڈز میں انگلینڈ کے خلاف تین ٹیسٹ میچ جیت چکی ہے جب کہ انگلینڈ کی ٹیم چار ٹیسٹ میچوں میں فاتح رہی ہے۔