- الإعلانات -

ٹاس ختم کرنے بجائے آئی سی سی کھیل میں پیدا ہونے والی خامیوں کو دور کرے.جاوید میانداد

اسلام آباد: پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان جاوید میانداد نے بین الاقوامی کرکٹ میں ٹاس ختم کرنے کی تجویز کو مسترد کردیا ۔انہوں نے کہا کہ دہائیوں پرانی اس روایت کو ختم کرنے کے بجائے آئی سی سی کو کھیل میں پیدا ہونے والی خامیوں کو دور کرنے کی ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ ٹیسٹ کرکٹ کا معیار گرگیا ہے اور ٹاس کو ختم کرنے سے کھیل مزید متاثر ہوگا۔خیال رہے کہ سابق آسٹریلوی کپتان رکی پانٹنگ اور عظیم ویسٹ انڈین کھلاڑی مائیکل ہولڈنگ نے حال ہی میں ٹیسٹ میچوں میں ٹاس ختم کرنے کی تجویز دی تھی۔رکی پونٹنگ نے انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان ہونے والی حالیہ ایشز ٹیسٹ سیریز کے دوران تجویز پیش کی تھی کہ بیرون ملک کھیلنے والی یا مہمان ٹیم کو پہلے باؤلنگ یا بیٹنگ کا اختیار دینا چاہیے تاکہ وہ ہوم ٹیم کی جانب سے اپنی مرضی وکٹ بنا کر حاصل کیے گئے فائدے کا مقابلہ کر سکیں۔ اسٹیو وا نے بھی اس تجویز کی حمایت کی تھی جبکہ مائیکل ہولڈنگ بھی اس تجویز کے حامی نظر آئے تھے۔تاہم پاکستان کی جانب سے 124 ٹیسٹ کھیلنے والے میاں داد نے کہا کہ ٹاس کھیل کے لیے فائدہ مند ہے، سکے کے ہوا میں جانے کے ساتھ ہی تجسس کا پہلو پیدا ہوجاتا ہے اور ہر کوئی اس فیصلے کا انتظار کررہا ہوتا ہے کہ ٹاس جیتنے والا کپتان بیٹنگ کرے گا یا فیلڈنگ۔انہوں نے کہا کہ ٹاس ہارنے یا جیتنے کا اثر میزبان ٹیم پر بھی پڑتا ہے اور اس کے پیچھے دی جانے والی منطق درست نہیں۔