- الإعلانات -

24 اکتوبر کو پاک بھارت میچ دیگر مقابلوں جیسا ہی ہے، ویرات کوہلی

دنیا بھر میں لوگ ٹی 20 ورلڈ کپ میں پاکستان اور بھارت کے درمیان میچ کے بے صبری سے منتظر ہیں۔

مگر بھارتی کپتان ویرات کوہلی نے میچ کو اپنی ٹیم کے لیے دیگر مقابلوں جیسا ‘ایک میچ’ قرار دیا ہے۔

پاکستان اور بھارت ٹی 20 ورلڈکپ کا آغاز ایک دوسرے کے خلاف میچ سے 24 اکتوبر سے کریں گے۔

خیال رہے کہ یہ ٹورنامنٹ بھارت میں ہونا تھا مگر کورونا وائرس کی وبا کے باعث اسے متحدہ عرب امارات میں منتقل کیا گیا۔

بھارتی کپتان سے جب پوچھا گیا کہ پاکستان کے خلاف کھیلتے ہوئے کیا دیگر ٹیموں کے مقابلے میں مختلف احساس ہوتا ہے تو انہوں نے کہا ‘صحیح بات تو یہ ہے کہ مجھے ایسا کبھی محسوس نہیں ہوا’۔

انہوں نے کہا ‘میں ہمیشہ اس مقابلے کے کسی کرکٹ میچ کی طرح کا سمجھتا ہوں، مجھے معلوم ہے کہ اس مقابلے کے حوالے سے لوگوں میں کافی جوش و خروش پایا جاتا ہے اور اس کی ٹکٹوں کی بہت زیادہ مانگ ہے’۔

ویرات کوہلی نے مذاق کرتے ہوئے کہا کہ وہ ہائی پروفائل میچ کے لیے اپنے دوستوں کو مفت ٹکٹ دینے سے اناکر کردیتا ہوں۔

انہوں نے کہا ‘اس وقت ٹکٹوں کی قیمت حیران کن حد تک بڑھ چکی ہے، تو میں جانتا ہوں کہ میرے دوستوں کی جانب سے ٹکٹوں کا کہا جائے گا اور میں انکار کردوں گا’۔

انہوں نے تسلیم کیا کہ روایتی حریفوں کے مقابلے کے حوالے سے مداحوں کے اشتیاق اور جوش و خروش اس میچ کو دیگر سے الگ کرتا ہے۔

ان کا کہنا تھا ‘ہاں آپ کہہ سکتے ہیں کہ ماحول مختلف ہے، مداحوں کے نکتہ نظر سے یہ یقیناً زبردست مقابلہ ہے، جہاں تک کھلاڑیوں کے نکتہ نظر ہے تو ہم جس حد تک پروفیشنل رہ سکتے ہیں ہمیں رہنا ہوگا’۔

پاکستان نے یو اے ای میں گزشتہ 10 ٹی 20 انٹرنیشنل میچوں میں کامیابی حاصل کی ہے اور 16 اکتوبر کو پاکستانی کپتان بابر اعظم نے کہا تھا کہ اس وجہ سے ان کی ٹیم کو بھارت کے خلاف ایڈوانٹیج حاصل ہے۔

بھارت کے خلاف ٹی 20 ورلڈکپ میں بھارت کے خلاف 5 میچوں میں شکست کے سوال پر ان کا کہنا تھا ‘ہم نے یو اے ای میں بہت زیادہ کرکٹ کھیلی ہے، یہاں کے حالات ہمارے لیے موزوں ہیں اور ہم جانتے ہیں کہ یہاں کیسے کھیلتے ہیں’۔