بین الاقوامی

بھارتی ریاست ہماچل پردیش میں مسافر بس کھائی میں جا گری، 25 افراد ہلاک

ہما چل پردیش: بھارت کی شمالی ریاست ہماچل پردیش میں مسافروں سے بھری بس کھائی میں گرنے سے کم ازکم 25 افراد ہلاک ہوگئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق حادثہ کولو ضلع میں بنجار کے مقام پر پیش آیا جہاں ایک پرائیویٹ بس گہری کھائی میں جاگری، بس میں گنجائش سے زائد افراد سوار تھے جب کہ بعض مسافر بس کی چھت پر بھی سفر کررہے تھے۔

کولو کے سپرنٹنڈنٹ آف پولیس کا کہنا ہے کہ بس میں 50 سے زائد مسافر موجود تھے جن میں سے کم ازکم 25 افراد موت کے منہ چلے گئے جب کہ 30 کے قریب زخمیوں کو ریسکیو کرکے مقامی اسپتال منتقل کردیا گیا ہے

زخمیوں میں درجن سے زائد خواتین اور 10 بچے بھی شامل ہیں، شدید زخمیوں میں سے بعض کی حالت تشویش ناک ہے اور اموات میں اضافے کا خدشہ ہے۔

دنیا بھر میں ایٹمی ہتھیاروں کی دوڑ میں پھر اضافہ

دنیا بھر میں جوہری طاقتوں میں ایک مرتبہ پھر اپنے ایٹمی اسلحے کو مزید جدید تر اور مہلک بنانے کے رجحان میں اضافہ دیکھا جانے لگا ہے۔

سوئیڈن  میں قائم بین الاقوامی ادارےاسٹاک ہوم انٹرنیشنل پیس ریسرچ انسٹیٹیوٹ’’سپری‘‘کی جانب سے جاری کی جانے والی تازہ ترین رپورٹ کے مطابق  دنیا بھر میں جوہری طاقتوں نے اپنے ایٹمی اسلحے کو جدید تر بنانے کے لیے سرمایہ کاری میں اضافہ کردیاہے۔

جوہری اسلحے کو جدید تر بنانے کیلئے خرچ کی جانےوالی رقم میں اضافہ

سپری نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ 2018 میں عالمی سطح پر ذخیرہ کردہ جوہری ہتھیاروں کی تعداد میں 4 فیصد کمی دیکھی گئی۔ 2018 کے آغاز میں جوہری طاقتیں کہلانےوالے ممالک کے پاس موجود ایٹمی ہتھیاروں اور وار ہیڈز کی تعداد 13ہزار 865 تھی جو 2017 کے مقابلے تقریباً 600 کم تھی۔  تاہم جن ریاستوں کے پاس جوہری ہتھیار ہیں انہوں نے اپنے اسلحے کو جدید تر بنانے کے لیے خرچ کی جانے والی رقم میں اضافہ کردیا۔

90 فیصد جوہری ہتھیار امریکا اور روس کے پاس

اس رپورٹ میں سپری نے جن 9 ممالک کے پاس جوہری ہتھیاروں کی موجودگی تسلیم کی ہے ان میں امریکا، روس،برطانیہ، فرانس، چین، بھارت، پاکستان، اسرائیل اورشمالی کوریا شامل ہیں۔ جب کہ دنیا بھر میں موجود جوہری ہتھیاروں کا تقریباً 90 فیصد صرف دو ممالک امریکا اور روس کے پاس ہے۔

اس وقت ایسے جوہری وار ہیڈزکی مجموعی تعداد بھی تقریباً 2000 بنتی ہے جنہیں ان 9 ممالک نے کسی بھی وقت استعمال کے لیے مکمل تیاری کی حالت میں رکھا ہوا ہے۔ رپورٹ کے مطابق اس سال جنوری تک امریکا کے پاس موجود جوہری ہتھیاروں کی تعداد 6 ہزار 185 اورروس کے پاس 6 ہزار 500 ہے۔

پاکستان اور بھارت کے پاس جوہری ہتھیاروں کی تعداد

سپری کی رپورٹ کے مطابق 2018 میں پاکستان اور بھارت نے اپنے اپنے جوہری ہتھیاروں کی تعداد میں اضافے کا رجحان جاری رکھا۔ اس کے علاوہ یہ دونوں حریف جوہری طاقتیں ان ایٹمی مادوں کی مدد سے آئندہ 10 سے لے کر 15 برس کے درمیان اپنے جوہری ہتھیاروں کی تعداد میں اضافہ کرسکتی ہیں۔ اس ادارے کا اندزہ ہے کہ بھارت کے پاس اس وقت 130 اور 140 کے درمیان جوہری وار ہیڈز موجود ہیں اور پاکستان کے پاس موجود وار ہیڈز کی تعداد 150 اور 160 کے درمیان ہے۔

امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ کا دوسری بار صدارت کیلئے انتخابی مہم کا آغاز

اورلینڈو: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دوسری بارصدارت کے لیے انتخابی مہم کا آغاز امریکی ریاست فلوریڈا سے کردیا۔

انتخابی مہم کے آغازپرخطاب کرتے ہوئے امریکی صدرنے کہا کہ معاشی حالات بہتر اور امریکا مستحکم ہورہا ہے، ہم زیادہ تر کام کرچکے، دوسرے دور صدارت میں تمام اہداف حاصل کریں گے، امریکا میں بیروزگاری کی شرح پہلے سے کم ہوگئی۔

ڈونلڈ ٹرمپ کا چین کے حوالے سے کہنا تھا چین پرعائد ٹیکس کام دکھانے لگے اور بین الاقوامی کمپنیاں چین چھوڑرہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ امریکی عوام پربوجھ ڈالنے کی خبریں جھوٹ ہیں لوگ ان خبروں پر توجہ نہ دیں، ڈیموکریٹ امریکا میں تقسیم درتقسیم چاہتے ہیں، تفتیش وتحقیقات کی آڑمیں مجھ پر حملہ عوام پرحملہ ہے، جو عوام کے حقوق اوربہتر مستقبل کے مخالف ہے، میرے مخالفین امریکی عوام کوبہترمستقبل سے محروم اور تباہ کرنا چاہتے ہیں۔

امریکی صدرکا کہنا تھا کہ رابرٹ مولر کی تحقیقات ہمارے لیے رکاوٹ اور الجھن کا معاملہ نہیں، میکسیکو کی سرحد پر 400 میل کی نئی دیوار 2020 تک مکمل ہوجائے گی۔

واضح رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نومبر 2016 میں اپنی حریف ہلیری کلنٹن کو شکست دے کر امریکا کے 45 ویں صدر منتخب ہوئے تھے۔

مصر کا اقوام متحدہ پر محمد مرسی کی موت کو ’’سیاسی‘‘ بنانے کا الزام

قاہرہ: مصر نے اقوام متحدہ کی جانب سے صدر مرسی کی موت پر ’’آزادانہ انکوائری‘‘ کا مطالبہ کرنے پر اس معاملے کو ’’سیاسی‘‘ بنانے کا الزام عائد کیا ہے۔

مصر کی وزارت خارجہ کے ترجمان احمد حفیظ نے پیر کو ایک عدالتی سماعت کے دوران اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق روپرٹ کولولی کی جانب سے سابق صدر محمد مرسی کی موت کی آزادانہ تحقیقات کے مطالبے کی سخت مذمت کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ایک قدرتی موت کو جان بوجھ کر سیاسی بنانے کی کوشش ہے۔

واضح رہے کہ مصر کے پہلے منتخب صدر محمد مرسی پیر کے روز عدالتی کارروائی کے دوران دل کا دورہ پڑنے سے جاں بحق ہوگئے تھے، جنہیں منگل کو قاہرہ میں خاموشی سے سپرد خاک کردیا گیا تھا۔

بنگلا دیش میں پاور پلانٹ سائٹ پر ہنگامہ آرائی میں مقامی مزدوروں کے ہاتھوں چینی قتل

ڈھاکا: بنگلا دیش میں زیر تعمیر پاور پلانٹ پر چینی اور مقامی مزدوروں کے درمیان تصادم میں ایک چینی ہلاک جبکہ درجنوں زخمی ہوگئے۔

بین الاقوامی میڈیا کے مطابق بنگل دیش کے دارالحکومت ڈھاکا کے جنوبی علاقے میں چین کی مالی معاونت سے ایک ہزار 320 میگا واٹ صلاحیت کے بجلی گھر کی تعمیر کی جارہی ہے۔ منصوبے پر مقامی مزدوروں کے علاوہ سیکڑوں چینی بھی کام کررہے ہیں۔ کام کے دوران ایک مقامی مزدور کی موت ہوگئی جس پر چینی اور بنگلا دیشی کارکنوں میں جھگڑا ہوگیا جس نے پرتشدد صورت اختیار کرلی، جھگڑے میں ایک چینی ہلاک جب کہ درجنوں زخمی ہوگئے۔

پولیس کے مطابق پاور پلانٹ سائٹ پر 6 ہزار سے زائد مزدور کام کررہے تھے، جن میں سے 2 ہزار چینی ہیں۔ مقامی پولیس چیف منیر الاسلام نے بتایا کہ تصادم میں درجنوں مزدور زخمی ہوئے جنہیں اسپتال منتقل کیا گیا۔ جہاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ایک چینی مزدور ہلاک ہوگیا۔ انہوں نے مزید بتایا کہ سائٹ پر حالات کو کنٹرول کرنے کےلیے ہزار سے زائد پولیس اہلکاروں نے حصہ لیا۔

مقبوضہ کشمیر میں بم دھماکے میں 2 بھارتی فوجی ہلاک اور 19 زخمی

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی گاڑی بارودی سرنگ دھماکے میں تباہ ہوگئی جس کے نتیجے میں 2 اہلکار ہلاک اور 19 زخمی ہوگئے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں بھارتی فوج کے دستے 44 راشٹریا رائفل کی وین آری ہال کے علاقے سے گزر رہی تھی کہ اچانک زور دار دھماکا ہوگیا جس کے نتیجے میں گاڑی کا اگلا حصہ مکمل طور پر تباہ ہوگیا۔

آئی ای ڈی بلاسٹ میں بھارتی فوج کے 21 اہلکار زخمی ہوئے جنہیں سری نگر میں بھارتی فوج کے 92 بیس اسپتال منتقل کیا گیا جہاں دو سپاہیوں نے دوران علاج دم توڑ دیا۔ ہلاک ہونے والوں کی شناخت امر جیت کمار اور بادل سنگھ کے نام سے ہوئی ہے۔

اسپتال ذرائع کا کہنا ہے کہ 19 زخمیوں میں سے 8 کی حالت نازک ہونے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خطرہ ہے، بھارتی فوج نے جائے وقوعہ کا گھیراؤ کر کے سرچ آپریشن کا آغاز کردیا ہے، تاحال کسی گروپ نے حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ضلع اننت ناگ میں نامعلوم مسلح افراد کے حملے میں بھارتی فوج کے میجر کیتن شرما ہلاک ہوگئے تھے جب کہ میجر راہول اور 2 اہلکار شدید زخمی ہوئے تھے جن میں سے ایک اہلکار نے آج اسپتال میں دم توڑ دیا

جاپان میں 6.8 شدت کے زلزلے کے جھٹکے، سونامی الرٹ جاری

ٹوکیو: جاپان کے شمال مغربی ساحلی علاقے میں طاقت ور زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے جس کے باعث سمندر میں دیو قامت لہریں پیدا ہوگئیں۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق چین کے بعد اب جاپان کے ساحلی علاقے میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں، ریکٹر اسکیل پر زلزلوں کی شدت 6.8 محسوس کی گئی ہے جس سے سمندر میں دیو قامت لہریں پیدا ہوگئیں۔

جاپان کے محکمہ موسمیات نے سونامی الرٹ جاری کیا ہے جس کے بعد ریسکیو اور بلدیاتی اداروں نے احتیاطی تدابیر اختیار کرتے ہوئے کسی بھی ممکنہ حادثے سے نمٹنے کی تیاریاں شروع کردی ہیں۔ ’کاشی وازاکی کاریوالا‘ کے ایٹمی پلانٹ کے ساتوں ریکٹرز بند اور محفوظ ہیں۔

محکمہ موسمیات نے ماہی گیروں کو یماگاتا، نیگاتا اور لشیکاوا کے علاقوں میں سمندر سے واپس ساحل پر آنے کی ہدایت جاری کی ہے جب کہ شہریوں کو بھی ان علاقوں کے ساحلوں پر جانے سے منع کیا گیا ہے۔ دو ٹرینوں کی سروس کو بھی معطل کردیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ جاپان دنیا بھر میں زلزلوں اور سونامی کے حوالے سے سب سے خطرناک ملک سمجھا جاتا ہے، مارچ 2011ء میں 9.0 شدت کے زلزلے کے باعث سونامی نے 18 ہزار زندگیوں کے چراغ گل کردیئے تھے۔

مقبوضہ کشمیر میں دو روز کے دوران شہادتوں کی تعداد 8 ہوگئی

سری نگر: بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں 2 کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا جب کہ دو مختلف علاقوں سے لاپتا دو کشمیری طلبا کی تشدد زدہ لاشیں بھی برآمد ہوئی ہیں۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے سرچ آپریشن کے نام پر چادر اور چار دیواری کا تقدس پامال کرتے ہوئے ظلم کی انتہا کردی، ضلع اسلام آباد میں 2 کشمیری نوجوانوں سجاد بٹ اور توصیف بٹ کو شہید کیا گیا۔

دوسری جانب اسی علاقے میں قابض بھارتی فوج نے ایک مکان کو مسمار کر دیا جس کے ملبے سے ایک نوجوان کی گولی لگی لاش ملی ہے، شہید کی شناخت نثار احمد کے نام سے ہوئی ہے اور وہ طالب علم تھا۔

ادھر سری نگر سے بھی 24 سالہ نوجوان کی تشدد زدہ لاش ملی ہے، نوجوان کی شناخت ہارون رشید کے نام سے ہوئی ہے۔ نثار احمد اور ہارون رشید دو دن سے لاپتا تھے۔ دو کشمیری نوجوانوں کی لاشیں ملنے کے بعد گزشتہ 2 دنوں میں شہادتوں کی تعداد 8 ہوگئی ہے۔

واضح رہے کہ ضلع پلوامہ میں گزشتہ روز ایک جھڑپ میں بھارتی فوج کا ایک میجر ہلاکہوگیا تھا، اس سے ایک روز قبل بارودی سرنگ دھماکے میں 2 فوجی اہلکار ہلاک اور 19 زخمی ہوگئے تھے جب کہ آج بھی اس ضلع میں ایک پولیس اسٹیشن پر گرنیڈ سے حملہ کیا گیا جس میں 6 افراد زخمی ہوئے۔

Google Analytics Alternative