- الإعلانات -

زیادہ نمک کھانے کی عادت کا ایک اور نقصان سامنے آگیا

بہت زیادہ یا بہت تیزی سے کھانے کے نتیجے میں پیٹ پھول جاتا ہے یا یوں کہہ لیں اندر سے سوج جاتا ہے جس کے نتیجے میں کافی تکلیف کا سامنا ہوتا ہے۔

مگر ایسا بھی ممکن ہے کہ آپ کی غذا میں ہمیشہ شامل کی جانے والی ایک چیز اس مسئلے کا باعث ہو۔

کہا جاتا ہے کہ زیادہ نمک کھانے کی عادت بلڈ پریشر کو بڑھانے کا باعث بنتی ہے مگر اس کے نتیجے میں پیٹ پھولنے کے مسئلے کا بھی زیادہ سامنا ہوتا ہے۔

یہ بات امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔

جونز ہوپکنز بلومبرگ اسکول آف پبلک ہیلتھ کی تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ جو لوگ غذا میں زیادہ نمک کھانے کے عادی ہوتے ہیں، ان کو پیٹ پھولنے کے مسئلے کا بھی زیادہ سامنا ہوتا ہے۔

پیٹ پھولنے کی شکایت دنیا بھر میں بہت عام ہے اور محققین کا کہنا تھا کہ نتائج سے معلوم ہوتا ہے کہ لوگ اپنی غذا میں نمک کی مقدار کم کرکے بھی اس مسئلے پر قابو پاسکتے ہیں۔

پیٹ پھولنے کا مسئلہ اس وقت ہوتا ہے جب معدے میں گیس کی مقدار بڑھ جاتی ہے اور اس تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ کہ نمک اس کی وجہ بننے والے عمل کو متحرک کرنے کا باعث بنتا ہے۔

یہ پہلی بار ہے جب دریافت کیا گیا کہ نمک پیٹ پھولنے کے مسئلے کا باعث بنتا ہے۔

محققین نے بتایا کہ زیادہ نمک کھانے والوں میں پیٹ پھولنے کا خطرہ 27 فیصد تک بڑھ جاتا ہے اور اس سے بچنے کا ایک موثر طریقہ غذا میں نمک کی مقدار کم کردیتا ہے۔

اس تحقیق کے نتائج طبی جریدے امریکن جرنل آف Gastroenterology میں شائع ہوئے۔