- الإعلانات -

سعودی عرب میں دورانِ آپریشن ڈاکٹر بھی حیران رہ گئے

مریض کے پیٹ سے 230 کیلیں اور شیشے کا ٹکڑا برآمد ہوگئیں

سعودی عرب میں دورانِ آپریشن ڈاکٹر بھی حیران رہ گئے۔ جدہ سعودی عرب کی طبی تاریخ میں ڈاکٹروں نے اللہ کی مدد سے ایک مریض کی جان بچا لی ہے اور دوران آپریشن تمام طبی عملہ بھی حیران پریشان رہ گیا جب مریض کے پیٹ سے 10، 20 نہیں بلکہ پوری 230 کیلیں اور ایک شیشے کا ٹکڑا برآمد ہوا۔ سعودی اخبار عاجل کے مطابق یہ واقعہ جدہ میں پیش آیا۔ جب ایک مقامی ہسپتال میں ایک ذہنی مریض کو لایا گیا جو انتہائی تکلیف کی حالت میں تھا۔
مریض کا پیٹ بُری طرح پھولا ہوا اور اسے شدید تکلیف اور چبھن محسوس ہو رہی تھی۔ جب اس کا ایکسرے کیا گیا تو پتا چلا کہ اس کے پیٹ میں کیلیں موجود ہیں۔ڈاکٹروں نے فوری طور پر اس کا آپریشن شروع کر دیا اور یہ جان کر ان کی حیرانی کی انتہا نہ رہی کہ اس کے جسم میں پورے 230 کیلیں اور ایک شیشے کا ٹکڑا موجود تھا۔
ڈاکٹروں کے مطابق اب اس مریض کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ تاہم اب اسے ذہنی مریضوں کے وارڈ میں منتقل کر کے اس کی ذہنی بیماری کا علاج ہو رہا ہے۔ کیونکہ اسی خراب ذہنی کیفیت کے زیر اثر اس نے یہ کیلیں اور شیشہ نگلا تھا۔ واضح رہے کہ کچھ عرصہ قبل ایک مقامی لڑکی کے پیٹ سے 2 کلووزنی بالوں کا بڑا سا گُچھا برآمد ہوا تھا۔ یہ 20 سالہ سعودی لڑکی کئی ماہ سے پیٹ کی شدید درد میں مبتلا تھی۔
والدین کی جانب سے کئی ڈاکٹروں کو دکھایا گیا مگر لڑکی کی تکلیف میں کوئی کمی واقع نہ ہوئی۔ حالت بگڑنے پراسے فوری طور پر طائف کے کنگ عبدالعزیز سپیشلسٹ ہسپتال کی ایمرجنسی میں منتقل کر دیا گیا۔ جہاں ڈاکٹروں نے تکلیف سے چیخ و پکار کرتی لڑکی کو کئی دوائیاں دیں مگر اس کی حالت میں کوئی بہتری نہ آئی۔ جس کے بعد پیٹ کا ایکسرے لیا گیا تو ڈاکٹرز یہ دیکھ کر حیران رہ گئے کہ لڑکی کے پیٹ میں بالوں کا ایک بہت بڑا گُچھا موجود تھا ، جس نے اس کے معدے کی تمام جگہ کو گھیر رکھا تھا۔
یہاں تک کہ خوراک کے گزرنے کی جگہ بھی نہ بچی تھی۔ ڈاکٹر محمد المہدی کی سربراہی میں ڈاکٹر محمد عبدہ، ڈاکٹر محمد الظہرانی اور دیگر ٹیکنیکل عملے کے ساتھ مل کر لڑکی کا آپریشن کیا گیا۔ سرجری کے دوران ڈاکٹرز کی حیرت کی انتہا نہ رہی جب ان کی توقع سے کہیں بڑھ کر بالوں کا لمبا اور وزنی گُچھا پیٹ سے نکالا گیا۔ جب ا س گُچھے کا وزن کیا گیا تو یہ دوکلو گرام سے بھی زائد نکلا۔
ڈاکٹر محمد المہدی کا کہنا تھا کہ لاکھوں میں سے کوئی ایک آدھ مریض ایسا ہوتا ہے جس کے پیٹ میں بال اُگنا شروع ہو جاتے ہیں، مگر جس رفتار اور مقدار میں اس لڑکی کے پیٹ میں بال اُگے، ایسا بہت کم دیکھنے میں آیا ہے۔ لڑکی کی آنتوں پر بھی بالوں کا یہ گُچھا اس بُری طرح لپٹ گیا تھا جس کی وجہ سے اسے شدید تکلیف ہوتی تھی۔