- الإعلانات -

مودی سرکار کے ہاتھ بے گناہوں کے خون سے رنگے ہیں، برطانوی رکن پارلیمنٹ عمران حسین

حریت پسند رہنما یاسین ملک کو عمر قید کی سزا ملنے کے بعد مسئلہ کشمیر کی برطانوی پارلیمنٹ میں بھی گونج سنائی دینے لگی ہے۔

تفصیلات کے مطابق لیبر پارٹی کے رکن عمران حسین نے پارلیمنٹ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی حکومت کشمیر میں غیر قانونی پبلک سیفٹی ایکٹ استعمال کررہا ہے، اور یہ غیر قانونی ایکٹ اپنے ہی ملک کے انسانی حقوق کے علم برداروں اور سیاسی رہنماؤں پراستعمال ہورہا ہے۔ مودی سرکار کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اس کے ہاتھ بے گناہوں کے خون سے رنگے ہوئے ہیں۔

عمران حسین نے برطانوی وزیر خارجہ ‘لز ٹروتھ ‘سے سوال کرتے ہوئے پوچھا کہ کیا مودی حکومت سے تجارتی معاہدہ کرنادرست ہے؟، جواباً وزیر خارجہ نے کہا کہ برطانیہ چاہتا ہے کہ پاکستان اور بھارت مل کر کشمیر کے مسئلے کا کوئی پائے دارحل نکالیں۔

واضح رہے کہ برطانوی اراکین پارلیمنٹ کشمیریوں پربھارتی مظالم کے خلاف وزیراعظم بورس جانسن کو خط بھی لکھ چکے ہیں۔ اراکین پارلیمنٹ کا موٰقف ہے کہ بھارتی عدالت نے یاسین ملک کو عمرقید کی سزا دے کر انصاف کا خون کیا، وزیراعظم بورس جانسن اس معاملے کو سنجیدہ لیتے ہوئے فوری مداخلت کریں۔

خط کے مندرجات میں یہ بھی لکھا تھا کہ مودی سرکار مقبوضہ کشمیر کے مسلمانوں پر بدترین مظالم ڈھا رہی ہے، حکومتِ برطانیہ کشمیریوں پر مظالم بند کرانے کے لیے اپنا اثرورسوخ استعمال کرے۔